The news is by your side.

Advertisement

لاہور مبینہ زیادتی واقعہ، لڑکی کا میڈیکل کروانے سے انکار

لاہور میں پب جی گیم پر دوستی اور شادی کا جھانسہ دے کر لڑکی کو مبینہ زیادتی کا نشانہ بنانے کے واقعے میں نیا موڑ آگیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق لاہور میں شادی اور پھر نوکری کا جھانسہ دے کر لڑکی سے مبینہ زیادتی کا نشانہ بنانے کے واقعے میں متاثرہ لڑکی نے عدالت اور پولیس کو میڈیکل کروانے سے تحریری طورپر انکار کردیا۔

لڑکی نے عدالت میں بیان دیا کہ پولیس زبردستی میرا میڈیکل کروانا چاہتی ہے، عدالت پولیس کو میرا میڈیکل کروانے سے روکے۔

متاثرہ لڑکی نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ میں اس کیس کی مزید پیروی نہیں کرانا چاہتی، عدالت نے ایس ایس پی انویسٹی گیشن کو میڈیکل نہ کروانے کا حکم دے دیا۔

مزید پڑھیں: گیم میں دوستی پھر شادی کا جھانسہ، لڑکی مبینہ زیادتی کا شکار

عدالت نے لڑکی کو بیان ریکارڈ کروانے کا حکم دے دیا۔

واضح رہے کہ اس سے قبل خبر آئی تھی کہ نوجوانوں نے پب جی گیم کے دوران لڑکی سے دوستی کی اور پھر شادی کا جھانسہ دے کر مبینہ طور پر جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا تھا۔

مقدمے کے متن کے مطابق لڑکی کا کہنا تھا کہ دونوں ملزمان نے لاہور میں ہی نوکری کا جھانسہ دیا اور ایک گھر میں لے جاکر اپنی جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا، کراچی سے آئی لڑکی نے بھاگ کر جان بچائی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں