site
stats
عالمی خبریں

سال 2017: دنیا بھر میں 65 صحافی اورمیڈیا ورکرز قتل ہوئے، رپورٹ

پیرس: آزادی صحافت کے لیے کام کرنے والی تنظیم رپورٹرز ود آؤٹ بارڈرز کا کہنا ہے کہ سال 2017 میں دنیا بھرمیں67صحافی اورمیڈیاورکرزقتل ہوئے جبکہ 326 جیلوں میں قید ہیں۔

تفصیلات کے مطابق صحافیوں کی بین الاقوامی تنظیم رپورٹرز وِدآؤٹ بارڈرز نے سال رواں کی رہورٹ جاری کردی ، رپورٹ کے مطابق 2017 ء کے دوران اپنے فرائض کی انجام دہی کے دوران مختلف ملکوں اور خطوں میں مارے جانے والے صحافیوں اور میڈیا ورکرز کی تعداد گذشتہ سال کے مقابلے میں کم ہو کر 65 رہ گئی۔

رپورٹ میں شام صحافیوں کے لیے خطرناک ترین ممالک میں سر فہرست ہے جبکہ دوسرےنمبر پر میکسیکو صحافیوں کے لئے خطرناک ملک ہے، شام میں12 اور میکسیکو میں11صحافیوں کو قتل کیا گیا۔

تنظیم کے مطابق سال 2017 میں فلپائن صحافیوں کے لئے ایشیا کا سب سے خطرناک ملک قرار دیا گیا ہے جبکہ  افغانستان، پاکستان اور بھارت بھی سرفہرست ہیں، پاکستان اور بھارت کا نمبر چوتھا ہے، دونوں ممالک میں سات، سات صحافیوں کو قتل کیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق رواں سال 326 صحافی مختلف جیلوں میں قید ہیں ، جن میں بیالیس صحافی ترکی کی جیل میں ہیں، جو دنیا بھر میں سب سے بڑی تعداد ہے۔

مجموعی طور پر گزشتہ 14 برسوں میں صحافیوں کی ہلاکتوں کی یہ سب سے کم سالانہ تعداد ہے۔

خیال رہے کہ رواں سال رواں دنیا کے کئی خطرناک ممالک میں صحافیوں کی پیشہ ورانہ سرگرمیوں کو محدود بھی کر دیا گیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top