The news is by your side.

Advertisement

آسٹریلیا کے سیاحتی مقام سے 7 افراد کی لاشیں برآمد

کینبرا: آسٹریلیا کے سیاحتی مقام سے 7 افراد کی گولیوں سے چھلنی لاشیں برآمد ہوئی ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق آسٹریلیا کے سیاحتی مقام سے خواتین اور بچوں سمیت 7 افراد کی گولیوں سے چھلنی لاشیں برآمد ہوئی ہیں، واقعہ مغربی آسٹریلیا کے علاقے اوسنگمٹن میں ساحل پر پیش آیا۔

آسٹریلیا کی تاریخ میں بائیس سال بعد پہلی مرتبہ کسی ایک واقعے میں اتنی بڑی تعداد میں لوگوں کو گولیاں مار کر ہلاک کیا گیا ہے۔

فائرنگ سے ہلاک ہونے والی خاتون کی شناخت کترینا مائلس کے نام سے ہوئی ہے جبکہ ان کے چار بچوں کی عمریں 8 سے 13 برس بتائی گئی ہیں۔

 پولیس افسر کرس ڈاسن کا کہنا تھا کہ ’جانی نقصان افسوسناک ہے چار بچوں اور تین نوجوانوں کا قتل ایک بڑا سانحہ اور المیہ ہے‘۔

آسٹریلوی پولیس کا کہنا ہے کہ فائرنگ سے ہلاکتوں کے محرکات معلوم نہیں ہوسکے ہیں تاہم چھان بین کا عمل شروع کردیا گیا ہے، قریبی رہائشیوں کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ رات چار بجے کے قریب فائرنگ کی آوازیں آئی تاہم ہمیں ایسا لگا کہ لوگ کینگروز کا شکار کررہے ہیں۔

واضح رہے کہ آسٹریلیا میں ہتھیاروں سے متعلق پالیسی انتہائی سخت ہے اور فائرنگ کے واقعات انتہائی کم ہوتے ہیں، آسٹریلوی پولیس کا کہنا ہے کہ اس قسم کے واقعے سے اسلحہ سے متعلق پالیسی اثر انداز نہیں ہوگی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں