The news is by your side.

Advertisement

70 سالہ بزرگ کی حادثاتی موت کا ڈراپ سین، جائیداد کیلیے قتل کیا گیا

اوکاڑہ میں 14 ماہ قبل 70 سالہ بزرگ کی حادثاتی موت کا ڈراپ سین ہوگیا، داماد نے جائیداد کی خاطر سسر کو دریا میں پھینک کر موت کے گھاٹ اتار دیا۔

کہا جاتا ہے کہ دنیا میں ہر ہونیوالےفساد یا جھگڑے کی وجہ زن، زر یا زمین ہوتی ہیں، بالخصوص زر اور زمین کی وجہ سے لوگ اپنےخونی رشتوں کی جان لینے سے بھی دریغ نہیں کرتے ایسا ہی کچھ ہوا ہے پنجاب کے شہر اوکاڑہ میں جہاں 14 ماہ قبل حادثاتی موت کا شکار ہونے والے 70 سالہ بزرگ کے قتل کا انکشاف ہوا ہے اور یہ کسی اور نے نہیں بلکہ ان کے داماد نے ہی کیا ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پنجاب کے شہراوکاڑہ میں 14 ماہ قبل 70 سالہ بزرگ کی حادثاتی موت کا ڈراپ سین ہوگیا، داماد نے جائیداد کی خاطر سسر کو دریا میں پھینک کر قتل کیا تھا اور پھر سسر کے لاپتہ ہونے کا ڈھونگ رچا کر اہلیہ کے ہمراہ سسر کے اغوا کا مقدمہ درج کرایا تھا۔

قاتل داماد نے صرف سسر کے اغوا کا مقدمہ ہی درج نہیں کرایا تھا بلکہ سسر کی بازیابی نہ ہونے پر متعلقہ پولیس کے خلاف رٹ پٹیشن بھی دائر کی تھی۔

تاہم جب تحقیقات ہوئیں تو یہی شخص اپنے سسر کا قاتل نکلا جس نے گرفتاری کے بعد دوران تفتیش اپنے جرم کا اعتراف بھی کرلیا ہے اور بتایا ہے کہ اس نے چار ایکڑ زمین ہتھیانے کے لیے اپنے سسر کا قتل کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں