The news is by your side.

Advertisement

پی سی بی سے مایوس سمیع اسلم امریکا منتقل ہوگئے

لاہور : قومی کرکٹر سمیع اسلم نے پاکستان کرکٹ بورڈ سے مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے مستقل طور پر امریکا منتقل ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق 24 سالہ پاکستانی کرکٹر سمیع اسلم کرکٹ بورڈ کی سلیکشن پالیسیوں سے سخت نالاں تھے، کیونکہ انہیں اچھی کارکردگی کے باوجود دورہ نیوزی لینڈ اور برطانیہ کےلیے اسکورڈ میں شامل نہیں کیا گیا۔

ٹیسٹ اوپنر  سمیع اسلم نے امریکا پہنچنے پر ٹوئٹ کیا کہ بوجھل دل کے ساتھ امریکا پہنچا ہوں اور پاکستان چھوڑنا آسان نہیں تھا کیونکہ کرکٹ میری روزی روٹی ہے اور پاکستان میں اب مستقبل کی کوئی امید نہیں۔

انہوں نے اپنے ٹوئٹ میں کہا کہ 2019 اور 20 کے قائداعظم ٹرافی میں سب سے زیادہ رنز بنانے والا کھلاڑی تھا جس نے 78 کی اوسط اور 4 سینچریوں کی مدد سے 864 رنز اسکور کیے تھے۔

مجھے صرف اس لیے ٹیسٹ اسکورڈ سے باہر کیا گیا تھا کیونکہ میں 2018 کے دورہ برطانیہ میں اچھی پرفارمنس نہیں دے سکا تھا۔

قومی کرکٹر نے نجی ٹی وی کو دئیے گئے ایک انٹرویو کے دوران کہا کہ میں دو سال دس ماہ بعد امریکا کی جانب سے کھیلنے کا اہل ہوں گا، میرا معاہدہ اچھا ہے ابھی میں ڈومیسٹک کرکٹ کھیلوں گا۔

خیال رہے کہ سمیع اسلم نے 2014 کے انڈر 19 ورلڈ کپ میں پاکستان ٹیم کی قیادت کی تھی جبکہ 2012 میں وہ بابر اعظم کی قیادت میں انڈر 19 ورلڈ کپ کھیل چکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں