The news is by your side.

Advertisement

پنجاب میں غیرت کے نام پر بیوی کا قتل، شوہر گرفتار

لاہور: پنجاب کے دار الحکومت لاہور میں پیش آیا انسانیت سوز واقعہ جہاں غیرت کے نام پر شوہر نے اپنی بیوی کو موت کے گھاٹ اتار دیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور کے علاقہ ڈھلوکی سے تعلق رکھنے والی چالیس سالہ نسرین آٹھ روز قبل اپنے بھتیجے محمد سجاد کے ساتھ گھر سے بھاگی تھی تاہم پنچائتی فیصلہ ہونے پر دو روز قبل ہی گھر واپس پہنچی جس کے بعد شوہر نے غیرت کے نام پر بیوی کو قتل کر دیا۔

کاہنہ پولیس کے مطابق سات بچوں کی ماں نسرین کو اس کے شوہر اشرف نے مبینہ طور پر کرنٹ لگا کر قتل کیا اور موقع سے فرار ہوگیا تاہم مقدمہ درج کرنے کے بعد ملزم کی گرفتاری کے لئے لاہور کے مختلف علاقوں میں چھاپے مارے گئے جس میں ملزم کی گرفتار عمل میں آئی۔

سال 2017: گیارہ ماہ میں 343 خواتین غیرت کے نام پر قتل

پولیس حکام کا کہنا تھا کہ غیرت کے نام پر قتل ہونے والی خاتون کی عمر چالیس سال تھی جسے ملزم نے بے دردی سے موت کے گھاٹ اتارا تاہم پولیس نے ملزم کے خلاف قتل دفعات کے تحت مقدمہ درج کر کے ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔

غیرت کے نام پر قتل کے خلاف قانون سازی کر رہے ہیں:‌ارم خالد

خیال رہے کہ واقعے کی خبر ملتے ہی قانون نافذ کرنے والے ادارے جائے وقوعہ پہنچے جس کے بعد فرانزک ٹیموں نے جائے وقوعہ کا معائنہ کیا اور مختلف اہم شواہد اکٹھے کیے البتہ پولیس نے لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے مردہ خانے منتقل کر دیا ہے جبکہ گرفتار ملزم سے مزید تفتیش کی جارہی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں