The news is by your side.

Advertisement

کیا عامر خان نے بالی وڈ کو خیرباد کہہ دیا؟ اداکار کی اہم وضاحت

ممبئی: بھارتی فلم انڈسٹری کے ”مسٹر پرفیکشنسٹ“ عامر خان نے دو سال قبل بالی وڈ چھوڑنے کا فیصلہ کیوں کیا؟ اداکار نے خود اس کی وضاحت کر دی ہے۔

”بالی وڈ ہنگامہ“ کے مطابق عامر خان نے انکشاف کیا ہے کہ میں نے فلم ”لال سنگھ چڈھا“ کی ریلیز سے پہلے ہی فلم انڈسٹری چھوڑنے کا فیصلہ کرلیا تھا تاہم میرے فیصلہ پر کرن راؤ (سابق اہلیہ) آبدیدہ ہوگئی تھیں۔

عامر خان نے بتایا کہ میں نے دو سال قبل کورونا وائرس کی وبا کے دوران بالی وڈ چھوڑنے پر غور کیا تھا لیکن اس کا باقاعدہ اعلان نہیں کیا کیوں کہ میرا خیال تھا کہ لوگ اسے ”لال سنگھ چڈھا“ کی تشہیر سمجھ سکتے تھے۔

ممبئی میں ایک تقریب میں پوچھے گئے سوال کے جواب میں عامر خان نے کہا کہ میں نے خیرباد کہا دیا لیکن اس بارے میں کوئی نہیں جانتا، میں نے اپنے گھر والوں کو بتا دیا تھا کہ میں اب سے کوئی فلم نہیں کروں گا اور نہ ہی کوئی فلم پروڈیوس کروں گا۔

مزید پڑھیں: عامر خان نے شراب کیسے چھوڑی؟

انہوں نے کہ میرے گھر والے حیران رہ گئے جب میں نے ان سے یہ بات کہی لیکن کسی نے مجھ سے بحث نہیں کی، تب میں نے سوچا کہ میں لوگوں کو بتا دوں کہ میں اب فلموں میں کام نہیں کروں گا، پھر میں نے کہا اگر میں لوگوں کو بتاؤں تو وہ کہیں گے یہ میری مارکیٹنگ سکیم ہے کیوں کہ میری فلم ”لال سنگھ چڈھا“ ریلیز ہونے والی ہے۔

عامر خان نے مزید کہا کہ ویسے بھی میری فلم تین چار سال بعد آتی ہے، لال سنگھ چڈھا کی ریلیز کے بعد کسی کو احساس نہیں ہوگا کہ میں اگلے تین یا چار سال تک کچھ کر رہا ہوں بھی یا نہیں، تب تک میں انڈسٹری چھوڑ دوں گا اور کسی کو پتہ نہیں چلے گا، چنانچہ میں نے کچھ نہ کہنے کا فیصلہ کیا اور تین ماہ اسی طرح گزر گئے۔

انہوں نے کہا کہ کرن نے روتے ہوئے کہاجب میں آپ کو دیکھتی ہوں تو مجھے آپ کے اندر فلمیں نظر آتی ہیں، آپ کیا کہہ رہے ہیں، میں سمجھ نہیں پا رہی۔

عامر خان نے کہا کہ ان دو سالوں میں بہت کچھ ہوا، میں نے انڈسٹری چھوڑ دی اور واپس بھی آگیا، میں نے انڈسٹری چھوڑنے کے بعد اپنی بیٹی کے ساتھ کام کرنا شروع کر دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں