site
stats
انٹرٹینمںٹ

پاکستان میں ’دنگل‘ نہیں سجےگا، عامر خان کے مداح مایوس

نئی دہلی: بالی وڈ کے مسٹر پرفیکشنسٹ عامر خان کی نئی فلم ’دنگل‘ کے تقسیم کاروں نے فلم کی پاکستان میں نمائش کی اطلاعات کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ دنگل پاکستانی سینماؤں کی زینت نہیں بنے گی۔

تفصیلات کے مطابق فلم ’دنگل‘ کے ڈسٹری بیوٹرز نے نئی دہلی سے جاری کردہ اپنے ایک بیان میں میڈیا میں گردش کرنے والی اس خبر کی تردید کی ہے جس کے مطابق عامر خان کی فلم ’دنگل‘ کی ہمسائے ملک میں بھی نمائش ہوگی۔


’’عامر خان نے فلم دنگل کیلئے اپنے وزن میں 30 کلو کا اضافہ کرلیا‘‘


بالی وڈ کے سلطان سلمان خان کی فلم رستم نے سرحد کے دونوں طرف کامیابی کے جھنڈے گاڑے تھے، پاکستانی شائقین نے بھی فلم سلطان کو پذیرائی بخشی تھی تاہم عامر خان کی جانب سے فلم دنگل میں اپنے جوہر دکھانے کے اعلان کے بعد سے شائقین کی پوری توجہ کا مرکز دنگل بن گئی ہے۔


’’ فلم دنگل میں عامر خان کے ایک جلوے نے دھوم مچادی‘‘


ابھی فلم جاری نہیں ہوئی لیکن فلم کے تیاری کے مراحل کی ویڈیو نے سوشل میڈیا پر دھوم مچا دی تھی بالخصوص عامر خان کی جانب سے فلم میں حقیقت کا رنگ بھرنے کے لیے پہلے اپنے وزن کو بڑھانا اور پھر دوبارہ اصل حالت میں لانے کی حیرت انگیز کار گذاری نے فلم کو ریلیز ہونے سے پہلے ہی قبول سند عام دے دی ہے۔

dungle-post-4

ایسی صورت حال میں فلم کے تقسیم کاروں کی جانب سے فلم کو پاکستان میں نمائش کے لیے پیش نہ کرنے کے بیان نے مسٹر پرفیکشنسٹ کے پاکستانی مداح اور فلم دنگل کے منتظر پاکستانی شائقین میں مایوسی کی لہر دوڑا دی ہے۔


’’ فلم دنگل کی ریلیز کی تاریخ نہیں بدلوں گا،عامر خان‘‘


واضح رہے فلم دنگل کے ڈسٹری بیوٹرز کا حالیہ بیان اس وقت آیا ہے جب پاکستانی سنیماؤں کے مالکان نےانڈین فلموں کی نمائش پر لگی پابندی ہٹا لی گئی ہے، بھارتی فلموں کو نمائش کی اجازت ملنے کے بعد پاکستانی شائقین فلم دنگل کی نمائش کے لیے امید لگائے بیٹھی تھی۔

dungle-post-2

پاکستانی سینیما کے مالکان کا کہنا ہے کہ بھارتی فلموں کی نمائش پر پابندی کے بعد سے انہیں 150 ملین روپے کا نقصان اٹھا نا پڑا ہے۔

خیال رہے ماہ ستمبر کے آخر میں لائن آف کنٹرول پر پیدا ہونے والی کشیدگی کے باعث بھارتی انتہا پسندوں نے پاکستانی اداکاروں کو ملک بدر کرنے اور ان تمام بھارتی فلموں کی نمائش پر پابندی لگا دی گئی تھی جس میں پاکستانی اداکاراؤں نے مرکزی کردار ادا کیئے تھے۔

dungle-post-3

بھارتی انتہا پسندوں کے آگے بے بس بھارتی حکومت نے نہ صرف یہ کہ پاکستانی اداکاروں کو ملک بدر کیا بلکہ اپنے ہی ملک میں بنی بھارتی فلموں پر صرف اس لیئے پابندی لگا دی کیوں کہ اس میں مرکزی کردار پاکستانی اداکاروں نے ادا کیئے تھے جس کے بعد پاکستانی سینماؤں کے مالکان نے بھی 30 ستمبر کو بھارتی فلموں کی نمائش پر پابندی لگادی تھی۔

dungle-post-1

یاد رہے ستمبر کے مہینے پاکستان اور بھارت کے لائن آف کنٹرول میں کشیدگی عروج پر تھی بھارت کی جانب سے سرجیکل اسٹرائیک کے مضحکہ خیز دعوے اور لائن آف کنٹرول پر بے گناہ معصوم شہریوں کو نشانہ بنانے کے بعد سے دونوں ممالک میں صورت حال کشیدہ ہے جس کا اثر فنون لطیفہ اور کھیلوں کے میدان میں بھی پڑا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top