site
stats
خیبر پختونخواہ

عنبرین قتل کیس: عدالت نے نو ملزمان کو جوڈیشل ریمانڈ پرجیل روانہ کردیا

ایبٹ آباد : عنبرین قتل کیس میں انسداد دہشت گردی ایبٹ آباد کی عدالت نے نو ملزمان کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا، تمام ملزمان نے عدالت کے سامنے صحت جرم سے انکارکر دیا۔

تفصیلات کے مطابق نو ملزمان جسمانی ریمانڈ ختم ہونے پر انسداد دہشت گردی کی عدالت میں پیش کیے گئے، تمام نو ملزمان نے عدالت کے سامنے صحت جرم سے انکار کردیا۔

عدالت کے فاضل جج نے نو ملزمان کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیجنےکا حکم دے دیا، اس سے قبل اس کیس میں ملوث مزید پانچ ملزمان پہلے ہی جیل جاچکے ہیں۔

انسداد دہشت گردی کی عدالت کے جج نے گزشتہ سماعت پر پولیس کی عنبرین قتل کیس کی تفتیش پر برہمی کا اظہار کیا تھا، عدالت کی جانب سے 37روزہ جسمانی ریمانڈ ملنے کے باوجود بھی ایبٹ آباد پولیس ملزمان سے صحت جرم کروانے میں ناکام رہی۔

وزیر اعظم پاکستان نواز شریف، وزیر اعلیٰ پرویز خٹک، اور قومی اسمبلی اور سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انسانی حقوق نے اس واقعہ کا نوٹس لیا تھا۔

چند روزقبل ایبٹ آباد کے نواحی علاقہ مکول پائیں میں عنبرین کو نامعلوم افراد نے قتل کرنے کے بعد اس کی لاش کو جلا دیا تھا۔

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top