The news is by your side.

Advertisement

ملا عبدالغنی برادر 20 سال بعد افغانستان روانہ

کابل: ملا عبدالغنی برادر دوحہ سے افغانستان کے لیے روانہ ہو گئے ہیں۔

افغان میڈیا کے مطابق افغانستان میں طالبان کے شریک بانی اور ملا محمد عمر کے نائب عبدالغنی برادر اخوند‎‎ افغانستان کے لیے روانہ ہو چکے ہیں، ملا عبدالغنی برادر  کو  افغانستان میں اہم ذمہ داری سونپے جانے کاامکان ہے۔

ملا برادر سینئر طالبان رہنماؤں کے ہمراہ افغانستان پہنچ رہے ہیں، افغان میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ ملا برادر پہلے قندھار اور پھر کابل جائیں گے، نیز ملا برادر تقریباً 20 سال کے بعد افغانستان جا رہے ہیں۔

واضح رہے کہ افغانستان میں نئی حکومت بنانے کی تیاریاں زور و شور سے جاری ہیں، بتایا جا رہا ہے کہ اہم مشاورت کے لیے ملا برادر قطر سے کابل روانہ ہوئے ہیں۔

افغانستان: سرکاری اہل کاروں‌کے لیے بھی عام معافی کا اعلان

افغانستان روانگی سے قبل ملا برادر نے قطری وزیر  خارجہ سے ملاقات کی، ملاقات دوحہ میں افغان طالبان کے سیاسی دفتر  میں ہوئی، افغان ٹی وی کے مطابق ملاقات میں افغانستان کی سیاسی ،سیکیورٹی پیش رفت پر تبادلہ خیال ہوا۔

خیال رہے کہ افغانستان میں حالات معمول پر آنے لگے ہیں، کابل میں کاروباری مراکز بھی کھل چکے ہیں، طالبان نے عام معافی کے اعلان کے ساتھ ساتھ یہ اعلان بھی کیا ہے کہ خواتین کو تعلیم اور روزگار کی اجازت ہوگی، افغان میڈیا پر خواتین اینکرز بھی دوبارہ اسکرینز پر نمودار ہو گئی ہیں۔

ذرائع کے مطابق ملا عبدالغنی برادر خصوصی طیارے کے ذریعے قطر سے افغانستان روانہ ہوئے، جہاں وہ تحریک طالبان کی جانب سے اگلے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے، کابل میں ملکی اور بین الاقوامی میڈیا کو پریس کانفرنس کے ذریعے بریف بھی کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں