The news is by your side.

Advertisement

چینی کی قیمتوں میں غیر ضروری اضافہ نہیں ہونے دیں گے: مشیر تجارت

اسلام آباد: مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد نے کہا ہے کہ چینی کی قیمتوں میں غیر ضروری اضافہ نہیں ہونے دیں گے۔

تفصیلات کے مطابق آج مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد کی زیر صدارت شوگر ایڈوائزری بورڈ کا اجلاس منعقد ہوا، اجلاس میں چینی کی طلب اور سپلائی کی مجموعی صورتِ حال کا جائزہ لیا گیا۔

اجلاس میں چینی کی قیمتوں سمیت شوگر انڈسٹری کے لیے طویل مدتی پالیسی پر تبادلۂ خیال کیا گیا، رزاق داؤد نے کہا کہ طویل مدتی پالیسی لانے کا مقصد مسائل کا مستقل حل ہے۔

مشیر تجارت نے کہا کہ ملک میں چینی کے اسٹاک کی موجودہ صورتِ حال تسلی بخش ہے، چینی کی قیمتوں میں غیر ضروری اضافہ نہیں ہونے دیں گے۔

یہ بھی پڑھیں:  رواں سیزن میں پنجاب میں 133 ارب روپے کا گنا خریدا گیا: وزیر اعلیٰ پنجاب

عبد الرزاق داؤد نے ایف بی آر اور کین کمشنرز کو ہدایت کی کہ چینی کے ذخیرے کا جائزہ لیا جائے، اور ایف بی آر اور کین کمشنرز ایک ہفتے میں رپورٹس جمع کرائیں۔

مشیر تجارت کا کہنا تھا کہ چینی برآمدات کے لیے اسٹیٹ بینک نے 5 لاکھ میٹرک ٹن کوٹہ منظور کر لیا ہے۔ انھوں نے اجلاس میں یہ ہدایت بھی کی کہ شوگر انڈسٹری کے لیے طویل مدتی پالیسی کے لیے سفارشات جمع کرائی جائیں۔

یہ بھی پڑھیں:  چینی کی قیمت میں بلا جواز اضافہ برداشت نہیں کیا جائے گا: عثمان بزدار

یاد رہے کہ تین ماہ قبل وزیرِ اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے ٹویٹر پر بتایا تھا کہ رواں سیزن میں پنجاب میں 133 ارب روپے کا گنا خریدا گیا اور صوبے میں گنے کے کاشت کاروں کو 113 ارب روپے ادا کیے گئے۔

دو ماہ قبل عثمان بزدار نے واضح پیغام دیا تھا کہ عوام کو زیادہ ریلیف فراہم کرنا ہماری حکومت کا ایجنڈا ہے، اس لیے چینی کی قیمت میں بلا جواز اضافہ برداشت نہیں کیا جائے گا اور حکومت چینی کی قیمت میں استحکام کے لیے ہر ممکن اقدام کرے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں