The news is by your side.

Advertisement

معروف صوفی بزرگ حضرت عبداللہ شاہ غازی کے 1289 ویں عرس کی تقریبات کا آغاز

کراچی : معروف صوفی بزرگ حضرت عبداللہ شاہ غازی کے 1289 ویں عرس کی تقریبات کا آغاز ہوگیا ہے، صوبائی وزرا ناصر حسین شاہ اور سعیدغنی نے چادر چڑھائی اور فاتحہ خوانی کی، اس موقع پر سیکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کئے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق معروف صوفی بزرگ حضرت عبداللہ شاہ غازی کے 1289 ویں عرس کی 3 روزہ تقریبات شروع ہوگئیں ، عرس کی تقریبات کا آغاز رات گئے سے شروع ہوئی، جب ان کے مزار کو مزار کو ہزاروں من عرق گلاب صندل اور کستوری سے غسل دیا گیا۔

صبح کے وقت صوبائی وزراناصر حسین شاہ اور سعید غنی نےعبداللہ شاہ غازی کےمزار پر حاضری دیتے ہوئے چادر چڑھائی اور فاتح خوانی کرکے عرس کاباقاعدہ آغازکیا۔

عبداللہ شاہ غازی کے 1289 واں عرس مبارک میں شرکت کیلئے ملک بھر سے زائرین کی آمد کا سلسلہ جاری ہے ، انتظامیہ عرس کے موقع پر سخت حفاظتی انتظامات کئے گئے ہیں ، پولیس اور رینجرز کے جوانوں کو مختلف مقامات پر تعینات ہیں ، جو تین مختلف مراحل میں زائرئن کی تلاشی لینے پر مامور ہیں۔

مزار کے دونوں اطراف ٹرانسپورٹ کو بند کر دیا گیا ہے اور زائرئن کو پیدل مزار پر جانے کی اجازت ہو گی جبکہ زائرین کی سہولت کیلئے دودھ شربت اور پانی کی سبیلیں بھی لگا دی گئیں، جبکہ محکمہ اوقاف کی جانب سے میڈیکل کیمپ بھی لگایا گیا ہے۔

عبداللہ شاہ غازی کے عرس کے دوران مزار پر لنگر کا اہتمام کیا جاتا ہے، مزار کے اندرونی حصے میں ثناء خوانی، فاتحہ خوانی اور قصیدہ پڑھنے کا سلسلہ جاری رہتا ہے۔ عرس کی تقریبات بائیس سے چوبیس اگست تک جاری رہیں گی۔

چوبیس اگست کواختتامی تقریب وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ چادرپوشی سے کریں گے۔

خیال رہے سید ابو محمد عبلہ المعروف عبداللہ شاہ غازی نے98ہجری میں مدینہ منورہ کے ایک معزز گھرانے میں آنکھ کھولی، آپ کاشجرہ نصب حضرت علی علیہ السلام سے ملتا ہے، ایک سو اڑتیس ہجری میں عبداللہ شاہ غازی تبلیغ دین کے لیے سندھ تشریف لائے اور 12برس تک اسلام کی تبلیغ میں سرکرداں رہے، آپ کے مزار پر آنے والے زائرین میں ہرمذہب کے افراد شامل ہوتے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں