The news is by your side.

Advertisement

مکہ مکرمہ میں دنیا کا سب سے بڑا ہوٹل جلد عوام کیلئے کھول دیا جائے گا

مکہ مکرمہ : مکہ المکرمۃ میں واقع دنیا کا سب سے بڑا ہوٹل ‘ابراج کدائی’ کی تکمیل تقریباََ مکمل ہیں اور توقع کی جارہی ہے کہ ہوٹل کو 2020 کے ابتدائی مہینوں میں کھول دیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب کے مقدس شہر مکہ مکرمہ میں دنیا کا سب سے بڑا اور عظیم الشان ہوٹل کا منصوبہ تکمیل کے آخری مراحل میں ہیں، اس ہوٹل کو ‘ابراج کدائی’ کا نام دیا گیا ہے۔

سعودی عرب کے شہر مکہ المکرمۃ میں تعمیر ہونے والے اس ہوٹل میں 10 ہزار کمرے ہیں اور یہ 14 لاکھ اسکوائر میٹر کے رقبے پر پھیلا ہوا ہے، یہ بڑا منصوبہ مکمل طور پر سعودی عرب حکومت کا منصوبہ ہے اور حکومت کی طرف سے اسے مکمل طور پر مالی اعانت فراہم کی گئی ہے۔

اس ہوٹل کی تعمیر پر لگ بھگ 3.5 بلین ڈالر لاگت آئی، جو پاکستانی روپے کے حساب سے تین کھرب 65 ارب بنتے ہیں۔

یہ ہوٹل 12 ٹاورزاور 45 منزلوں پر مشتمل ہیں، جس میں 10،000 بیڈ رومز ، 70 ریستوراں اور ہیلی پیڈ ہوں گے، اس میں موجود 10 ہوٹل میں 4 اسٹارز جبکہ دو میں 5 اسٹار کی سہولیات دی جائیں گی اور وہ کمرے اہم افراد کے لیے مختص کیے جائیں گے۔

دس ہزار کمروں پر مشتمل اس ہوٹل کا پانچواں فلور شاہی خاندان کے لیے مختص کیا گیا ہے اور یہ ہوٹل مسجد الحرام سے صرف دو کلومیٹر پر واقع ہے جہاں ہر سال لاکھوں عازمین حج اور عمرہ زائرین رہائش اختیار کرسکیں گے۔

یہ ہوٹل اسلامی فن تعمیر کا شاہکار مانا جارہا ہے ، اس کا ڈیزائن بین الاقوامی کمپنی دارالاہندسہ نے تیار کیا ہے، بارہ برج اور اندلسی گنبد اس کا طرہ ء امتیاز ہوں گے، ہوٹل اتنا بڑا ہے کہ یہاں سے شہر کے دوسرے علاقے اور قصبے چھوٹے دکھائی دیں گے۔

خیال رہے اس سے قبل ہوٹل کی لانچنگ سال 2017 میں توقع کی جارہی تھی ، لیکن کچھ مالی بحران اور مسائل کی وجہ سے اس منصوبے میں ایک لمبی تاخیر ہوئی ہے اور اب توقع کی جارہی ہے کہ سال 2020 کے ابتدائی مہینوں میں یہ ہوٹل کھول دیا جائے گا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں