The news is by your side.

Advertisement

منی لانڈرنگ کیس : سلمان شہباز کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کرنے کا حکم

لاہور : احتساب عدالت نے اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کے صاحبزادے سلمان شہباز کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کرنے کاحکم دے دیا اور نیب کو ہداہت کی شہباز شریف سابق وزیراعلی اور موجودہ اپوزیشن لیڈر ہیں انکی عزت اور تکریم کا خیال رکھا جائے۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت نے شہبازشریف خاندان کے خلاف منی لانڈرنگ ریفرنس کی گزشتہ سماعت کا تحریری حکم جاری کر دیا، احتساب عدالت کے ایڈمن جج جواد الحسن نے شہبازشریف کے خاندان کے خلاف گزشتہ سماعت کا چار صفحات پر مشتمل فیصلہ جاری کیا۔

عدالتی حکم میں کہا گیا ہے کہ وزرات خارجہ کی رپورٹ کے مطابق سلیمان شہباز ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری وصول نہیں کررہا ، ملزم بیرون ملک میں جان بوجھ کرعدالت کا حکم نامہ موصول نہیں کررہا، لہذا عدالت سلیمان شہباز کو اشتہاری قرار دینے کی کاروائی کا حکم دیتی ہے۔

تحریری حکم میں کہا ہے کہ گرفتار ملزم شہباز شریف نے شکایات کی نیب کی جانب سے غیر انسانی سلوک کیا جارہا ہے اور انہیں کھانا زمین پر رکھ کہ دیا جارہا ہے عدالت نے نیب کو ہدایت کی کہ شہباز شریف سابق وزیراعلی اور موجودہ اپوزیشن لیڈر ہیں انکی عزت اور تکریم کا خیال رکھا جائے، کسی اتھارٹی کو ہرگز اجازت نہیں ہے کہ وہ ملزم کی عزت نفس مجروح کریں۔

عدالت کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کے مطابق نصرت شہباز ،رابعہ عمران جلد ٹرائل کا سامنا کریں گی ، نصرت شہباز،رابعہ عمران کواشتہاری قرار دینے کی کارروائی فی الحال روکی جاتی ہے اور غیر حاضر ملزمان کو ٹرائل جوائن کرنے کا حکم دیاجاتا ہے۔

شہبازشریف خاندان کے خلاف منی لانڈرنگ ریفرنس پر آئندہ سماعت تیرہ اکتوبر کو ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں