The news is by your side.

Advertisement

احتساب عدالت کے جج نے نواز شریف کے خلاف مزید ریفرنسز کی سماعت سے معذرت کر لی

اسلام آباد: احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا یافتہ سابق وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف مزید دو ریفرنسز کی سماعت سے معذرت کر لی ہے۔

تفصیلات کے مطابق جج محمد بشیر کی جانب سے لکھا گیا معذرت کا خط اسلام آباد ہائی کورٹ کو موصول ہوگیا ہے، جس میں انھوں نے کیس سے علیحدگی کی ایک قانونی پوزیشن اختیار کی ہے۔

ذرائع کے مطابق احتساب عدالت کے جج نے خط میں لکھا کہ ایون فیلڈ ریفرنس کا فیصلہ کر چکا ہوں، العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنسز دوسری عدالت کو منتقل کر دیے جائیں۔

جج محمد بشیر کا کہنا تھا کہ نواز شریف کے وکیل نے بھی ان پر اعتراض کر دیا ہے، اس لیے وہ العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنسز کی سماعت نہیں کرسکتے۔ انھوں نے اسلام آباد ہائی کورٹ کو لکھا ’ایک ریفرنس کا فیصلہ دیا، مجھ پر اعتراضات آرہے ہیں، چاہیں تو میرا تبادلہ کر دیں۔‘

ایون فیلڈ فیصلہ، نوازشریف، مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی اپیلیں کل سماعت کے لیے مقرر

احتساب عدالت کے جج نے ہائی کورٹ سے دریافت کیا ’موجودہ حالات میں انھیں ریفرنسز کے حوالے سے پوزیشن بتائی جائے، اسلام آباد ہائی کورٹ بتائے کہ ریفرنسز پر سماعت جاری رکھی جائے یا نہیں۔‘

 ذرائع کا کہنا ہے کہ جج محمد بشیر نے اسلام آباد ہائی کورٹ سے رہنمائی مانگی ہے، سماعت سے معذرت نہیں کی۔ واضح رہے کہ شریف خاندان نے ایون فیلڈ ریفرنس کے فیصلے کے خلاف اسلام آباد ہائی کورٹ میں اپیلیں دائر کردی ہیں جنھیں سماعت کے لیے منظور کر لیا گیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں