site
stats
پاکستان

قتل کا ملزم 11 سال جیل میں گزارنے کے بعد بری

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے قتل کے ملزم ریاض احمد کو 11 سال بعد بری کردیا۔ ملزم کو ٹرائل کورٹ اور ہائی کورٹ نے سزائے موت سنائی تھی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ نے 11 سال بعد قتل کے ملزم ریاض احمد کو بری کردیا۔

اپنے فیصلے میں عدالت کا کہنا تھا کہ استغاثہ اپنا کیس ثابت کرنے میں ناکام رہا۔ سماعت کے دوران جسٹس کھوسہ نے کہا کہ دونوں عدالتوں نے حقائق کا درست جائزہ نہیں لیا۔

بعد ازاں سپریم کورٹ نے تمام سزائیں معطل کر کے ریاض احمد کو فوری رہا کرنے کا حکم دے دیا۔

ریاض احمد پر سنہ 2005 میں عامر فاروق نامی شخص کو قتل کرنے کا الزام تھا۔ اس سے قبل ریاض احمد کو ٹرائل کورٹ اور ہائیکورٹ سزائے موت سنا چکی تھی۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز بھی سزائے موت کے ملزم صفدر علی کو 12 سال بعد بری کیا گیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top