The news is by your side.

Advertisement

لیجنڈ اداکار سدھیر کی 22 ویں برسی

لاہور: پاکستانی فلم انڈسٹری کے لیجنڈ اداکار سدھیر کی 22 ویں برسی آج منائی جا رہی ہے، انہوں نے 200 سے زائد فلموں میں اداکاری کے جوہر دکھائے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستانی فلم انڈسٹری میں 40 سال تک اداکاری کے جوہر دکھانے والے ہیرو لالہ سدھیر کو ہم سے بچھڑے 22 برس بیت گئے۔

پاکستان کے پہلے ایکشن ہیرو کا خطاب پانے والے شاہ زمان المعروف سدھیر 25 جنوری 1922 کو لاہور میں پیدا ہوئے۔

فلم انڈسٹری سے وابستہ لوگ انہیں لالہ سدھیر کہہ کر پکارتے ہیں، وہ اداکاروں کی تنظیم کے چیئرمین بھی رہے۔

قیام پاکستان کے بعد سدھیر کی پہلی فلم ’ہچکولے‘ تھے اسی دور میں ان کی فلم ’دوپٹہ‘ مقبول ہوئی جس میں وہ نور جہاں اور اجے کمار کے مقابل جلوہ گر ہوئے جبکہ 1956 میں فلم ’ماہی منڈا‘ اور ’یکے والی‘ نے سدھیر کو بام عروج پر پہنچا دیا۔

معروف اداکار نے اسی دور کی ہیروئن سشمی کواپنا شریک حیات بنایا لالہ سدھیر کو جنگ وجدل پرمبنی فلموں میں بہترین پرفارمنس پرجنگجو ہیرو کا خطاب بھی دیا گیا۔

سدھیر نے 200 سے زائد فلموں میں مختلف کردار ادا کیے، ان کی مقبول فلموں میں دوپٹہ، سسی، کرتار سنگھ ، بغاوت، یکے والی، جی دار، حکومت، چاچا خوامخواہ، ڈاچی، ماں پتر، اباجی، چٹان، جانی دشمن، لاٹری اور ان داتا شامل ہیں۔

معروف اداکارکو 1970 میں پنجابی فلم ’ماں پتر‘ اور 1974 میں ایک اور پنجابی فلم ’لاٹری‘ پر بہترین اداکار کا نگار ایوارڈ دیا گیا۔

شاہ زمان المعروف سدھیر 19 جنوری 1997 کو لاہور میں وفات پاگئے، وہ لاہور میں ڈیفنس سوسائٹی کے قبرسان میں دفن ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں