The news is by your side.

Advertisement

سندھ اسمبلی میں وزیرِ اعلیٰ کے خلاف تحریکِ التوا مسترد

کراچی: اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درّانی نے وزیرِ اعلیٰ مراد علی شاہ کے خلاف پی ٹی آئی کی جانب سے جمع کرائی جانے والی تحریکِ التوا مسترد کر دی۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے رہنما خرم شیر زمان نے سندھ اسمبلی میں وزیرِ اعلیٰ سندھ کے خلاف تحریک التوا جمع کرائی تھی۔

پیپلز پارٹی کی سعدیہ جاوید نے سندھ اسمبلی میں حکومتی ارکان کے خلاف قرارداد جمع کرا دی۔

اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی نے فنی بنیاد پر تحریکِ التوا رد کر دی۔

دوسری طرف سندھ اسمبلی میں اہم حکومتی ارکان کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی قرارداد جمع کرائی گئی۔

یہ قرارداد پیپلز پارٹی کی سعدیہ جاوید نے سندھ اسمبلی میں جمع کرائی، قرار داد میں کہا گیا کہ وزیرِ دفاع پرویز خٹک، زلفی بخاری کا نام بھی ای سی ایل میں ڈالا جائے۔

قرارداد میں وفاقی وزیر قانون و انصاف بیرسٹر فروغ نسیم اور وفاقی وزیر اور ایم کیو ایم پاکستان کے کنوینر خالد مقبول صدیقی کا بھی ذکر شامل ہے۔


یہ بھی پڑھیں:  وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا دورہ سندھ ملتوی


خیال رہے کہ وزیرِ اعلیٰ سندھ کے خلاف جمع کرائی گئی تحریکِ التوا میں کہا گیا تھا کہ جے آئی ٹی میں نام آنے پر مراد علی شاہ صادق و امین نہیں رہے۔

خرم شیر زمان کی جانب سے جمع کرائی گئی تحریکِ التوا میں وزیرِ اعلیٰ سندھ سے استعفے کا بھی مطالبہ دہرایا گیا، متن میں کہا گیا کہ مراد علی شاہ مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث رہے ہیں، انھوں نے اومنی گروپ کو فائدہ پہنچایا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں