The news is by your side.

Advertisement

فلم اے دل ہے مشکل کی ریلیز، بھارتی انتہا پسندوں نے 5 کروڑ مانگ لیے

نئی دہلی: بھارت میں ہندو انتہاپسند تنظیموں نے فلم انڈسٹری پر غنڈہ ٹیکس عائد کردیا اور کہا ہے کہ اگر پاکستانی اداکاروں کو فلم میں شامل کرنا ہے تو پانچ کروڑ روپے اداکرو ورنہ فلم کی ریلیز روک دی جائے گی۔

اطلاعات کے مطابق ہندو انتہا پسند رہنما بال ٹھاکرے کے بیٹے راج ٹھاکرے نے فلم پروڈیوسرز کو دھمکیاں دی ہیں جس کے بعد معروف فلم ساز اور ہدایت کار کرن جوہر فلم آن ائیر کرنے کے لیے بھتہ ادا کرنے پر تیار ہوگئے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ فلم اے دل ہے مشکل کے ڈائریکٹر کرن جوہر نے مکیش بھٹ کے ہمراہ مہارشٹرا کے وزیر اعلیٰ دیوبند فڈناوز سے ملاقات کی، جس میں انہوں نے فلم دیوالی کے موقع پر فلم کی ریلیز سے متعلق یقین دہانی کروائی۔

اس ملاقات میں بالی ووڈ کے دیگر پروڈیوسرز کے ساتھ ساتھ ایم این ایس کے چیف راج ٹھاکرے بھی موجود تھے جنہوں نے فلم میں فواد خان کی شمولیت پر شدید احتجاج کرتے ہوئے ریلیز رکوادی تھی، راج ٹھاکرے نے کرن جوہر کو فلم کی مشروط ریلیز کی اجازت دیتے ہوئے کہا کہ جو بھارتی پروڈیوسر پاکستانی اداکاروں کے ساتھ کام کرے گا اُسے 5 کروڑ روپے جمع کروانے ہوں گے۔

علاوہ ازیں راج ٹھاکرنے سے مٹینگ میں اپنی تین شرائط بھی پیش کیں جن میں فلم سے قبل ہندوستان فوجیوں کو خراج تحسین، مستقبل میں پاکستانی اداکاروں کو فلم میں کام نہ دینے کی شرائط پیش کی گئیں تھی جس پر تمام لوگوں نے رضامندی ظاہر کردی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں