The news is by your side.

Advertisement

پتا نہیں‌ عمران خان کومشورے کون دیتا ہے، اعتزاز احسن

اسلام آباد: پیپلز پارٹی کے سینیٹر چوہدری اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ عمران خان کے بیان پر افسوس ہوا،تحریک انصاف کا پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس کا بائیکاٹ کرنے کا فیصلہ غلط ہے، پتا نہیں عمران خان کو کون مشورے دے رہا ہے۔

یہ پڑھیں: پی ٹی آئی کا پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں شرکت نہ کرنے کا اعلان

پارلیمنٹ ہائوس کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چوہدری اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ پہلے بھی کئی بار تحریک انصاف وزیراعظم کی دعوت پر بلائے گئے اجلاس میں شریک ہوئی تو پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں کیوں نہ آئے۔


یہ پڑھیں:الطاف حسین کی طرح پی پی بھی زرداری کو الگ کردے، عمران


انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں جاکر پیپلز پارٹی نے درست قدم اٹھایا، ہمارے چیئرمین تک اجلاس میں آگئے کہ مہمانوں کی گیلری میں آکر بیٹھ گئے لیکن تحریک انصاف نے اجلاس کا بائیکاٹ کردیا۔

یہ بھی پڑھیں:نوازشریف کی موجودگی میں پارلیمنٹ میں نہیں آئیں گے، عمران خان

انہوں نے کہا کہ جب تنقید ہوئی تو عمران خان نے اپنا غصہ پی پی پر نکال دیا، ہم نے مشترکہ اجلاس میں شرکت کی اور سخت تقاریر بھی کیں ۔

اسی سے متعلق:پارلیمنٹ کے بےسود اجلاس میں شرکت نہ کرنے پر قائم ہیں،عمران خان

قبل ازیں پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یقین ہے کہ اڑی حملے سے پاکستان کا کوئی تعلق نہیں، وزیراعظم کو اقوام متحدہ کی تقریر میں کلبھوشن یادیو کا تذکرہ بھی کرنا چاہیے تھا، میں اس دن کا انتظار کروں گا جب وزیراعظم خود کلبھوشن یادیو کے پکڑے جانے کا تذکرہ کریں گے کیوں کہ جاسوسی کی تاریخ میں کبھی اتنا بڑا افسر  کسی کے ہاتھ نہیں آیا،

انہوں نے کہا کہ پاناما پیپرز میں نام آنے پرسب سے پہلے وزیراعظم خود کو کلیئر کرائیں،اقتصادی راہداری کو حکومت نے خود متنازع بنایا ہے اوریہ تاثر پھیلتا جارہا ہے کہ سی پیک اصل میں چائنا پنجاب کوریڈور ہے۔

پاکستان میں سارک کانفرنس ملتوی ہونے کے ذمہ دار وزیراعظم ہیں، اعتزاز احسن

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں