The news is by your side.

Advertisement

افغان حکومت نے طالبان قیدیوں کا گروپ رہا کردیا

کابل: افغان حکومت کی جانب سے معاہدے کے تحت طالبان کی قیدیوں کی رہائی کا سلسلہ جاری ہے، افغان حکومت نے طالبان قیدیوں کا ایک اور گروپ رہا کردیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ترجمان افغان صدر نے کہا کہ افغان حکومت نے طالبان قیدیوں کا ایک اور گروپ رہا کردیا ہے، پیر سے اب تک 200 طالبان قیدیوں کو رہا کیا جاچکا ہے۔

ترجمان افغان حکومت کا کہنا ہے کہ افغان حکومت نے اپنا وعدہ پورا کردیا اب طالبان کی باری ہے، امید ہے طالبان بھی افغان قیدیوں کو جلد رہا کردیں گے۔

علاوہ ازیں افغان صدر اشرف غنی اور عبداللہ عبداللہ نے کابل میں افغان مذاکراتی ٹیم سے ملاقات کی جس میں افغان صدر نے مذاکراتی ٹیم سے طالبان کے ساتھ مذاکرات کے آغاز اور جاری امن معاہدے پر گفتگو کی۔

مزید پڑھیں: افغان طالبان کے وفد کی شاہ محمود قریشی سے ملاقات، اہم امور پر گفتگو

واضح رہے کہ امریکا، طالبان اور افغان حکومت کی جانب سے معاہدے کے تحت قیدیوں کی رہائی کا سلسلہ جاری ہے تاہم طالبان کی جانب سے سیکیورٹی فورسز کو بھی نشانہ بنایا جارہا ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ ماہ 25 اگست کو ملا عبدالغنی بردار کی سربراہی میں افغان طالبان کے وفد نے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے ملاقات کی تھی جس میں افغان امن عمل میں پیشرفت، بین الافغان مذاکرات کے جلد انعقاد پر گفتگو کی گئی تھی، وفد نے طالبان امریکا معاہدے پر عملدرآمد سے متعلق بھی آگاہ کیا تھا۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ افغان مسئلے کا حل مذاکرات کے ذریعے ہی ممکن ہے، مخلصانہ کاوشیں دوحہ معاہدے کی صورت میں بارآور ثابت ہوئیں، توقع ہے کہ افغان قیادت نادر موقع سے بھرپور فائدہ اٹھائے گی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں