The news is by your side.

Advertisement

افغان صدر اشرف غنی نے طالبان قیدیوں کی رہائی کا اشارہ دے دیا

کابل: افغان صدر اشرف غنی کا کہنا ہے کہ طالبان قیدیوں کی رہائی کا شفاف طریقہ کار مرتب کرنا ہوگا، ضمانت دینی ہوگی رہا کیے گئے طالبان قیدی دوبارہ حملے نہیں کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق افغان صدر اشرف غنی نے طالبان قیدیوں کی رہائی کا اشارہ دے دیا۔ اشرف غنی نے کہا کہ افغان حکومت کو 5 ہزار طالبان جنگجوؤں کو مزید قید رکھنے کا فائدہ نہیں ہے۔

افغان صدر کا کہنا تھا کہ طالبان قیدیوں کی رہائی کا شفاف طریقہ کار مرتب کرنا ہوگا، ضمانت دینی ہوگی رہا کیے گئے طالبان قیدی دوبارہ حملے نہیں کریں گے۔

کابل میں خوفناک حملہ، 27 ہلاک

افغانستان کے دارالحکومت کابل میں گزشتہ روز افغان رہنما کی برسی کی تقریب پر ہونے والے حملے میں درجنوں افراد ہلاک ہوئے، چیف ایگزیکٹو عبداللہ عبداللہ بھی تقریب میں موجود تھے تاہم وہ بال بال بچ گئے۔

طالبان قیدیوں کو رہا کرنے کے پابند نہیں، افغان صدر اشرف غنی کا یوٹرن

اس سے قبل یکم مارچ کو افغان صدر اشرف غنی کا کہنا تھا کہ طالبان کو رہا کرنے کے پابند نہیں، ہم نے ایسا کوئی وعدہ نہیں کیا، معاہدہ بند دروازوں میں ہوا، اس پرعمل درآمد میں مشکلات ہیں۔

اشرف غنی کا کہنا تھا کہ قیدیوں کی رہائی کا اختیار امریکا کے پاس نہیں ہہ ہمارا اختیار ہے، طالبان قیدیوں کی رہائی کا معاملہ مذاکرات کی پیشگی شرط نہیں بن سکتا۔

افغان طالبان اور امریکا کے درمیان تاریخ ساز امن معاہدے پر دستخط ہوگئے

یاد رہے کہ گزشتہ ماہ 29 فروری کو افغان طالبان اور امریکا کے درمیان تاریخ ساز امن معاہدے پر دستخط ہوئے تھے، افغان طالبان کی جانب سے ملاعبدالغنی برادر اور امریکا کی جانب سے نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد نے دستخط کیے تھے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں