The news is by your side.

Advertisement

ترکی میں داخل ہونے والے افغان مہاجرین کی تعداد میں ریکارڈ اضافہ

انقرہ: رواں برس کے دوران ترکی میں داخل ہونے والے افغان مہاجرین کی تعداد میں ریکارڈ اضافہ ہوا ہے۔

ترک وزارت داخلہ کے مطابق گزشتہ چار مہینوں کے دوران ترکی آنے والے افغان مہاجرین کی تعداد تقریباً 30 ہزار سے تجاوز کرچکی ہے، ترک وزیر داخلہ سلیمان سوئے لو کا کہنا ہے کہ دیگر ممالک سے تعلق رکھنے والے مہاجرین بھی ترکی آئے ہیں لیکن ان میں افغان مہاجرین کی تعداد کہیں زیادہ ہے۔

ترک وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ رواں برس کے پہلے چار ماہ میں ترکی آنے والے افغان مہاجرین کی تعداد 29 ہزار 8 سو 99 رہی جو گزشتہ برس کے مقابلے میں غیر معمولی حد تک زیادہ ہے۔

سلیمان نے کہا ہے کہ 2017ء میں ترکی آنے والے افغان مہاجرین کی تعداد 45 ہزار کے لگ بھگ تھی لیکن رواں برس اس میں ریکارڈ اضافہ ہوا ہے جبکہ ان میں سے زیادہ تر افغان مہاجرین غیر قانونی طریقے سے ترکی میں داخل ہوئے ہیں۔

ترک وزیر داخلہ کا کہنا ہے کہ انقرہ حکومت کی کوشش ہے کہ غیر قانونی مہاجرین کو وطن آنے سے روکا جائے، جس کی خاطر سرحدوں پر سیکیورٹی بڑھائی جارہی ہے، سیکیورٹی اہلکاروں نے مختلف علاقوں میں کارروائی کرتے ہوئے انسانی اسمگلنگ میں ملوث افراد کو گرفتار کیا ہے۔

ترکی نے ہمسایہ ملک ایران کی سرحد پر ایک دیوار کی تعمیر شروع کردی ہے، حکام کے مطابق زیادہ تر افغان مہاجرین اسی سرحدی راستے کا استعمال کرتے ہوئے ترکی آتے ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں