The news is by your side.

Advertisement

افغان طالبان رہنما ملا اخترمنصورجھڑپ میں زخمی

کابل: افغان طالبان کے رہنما ملا اختر منصورایک گروہی اجلاس میں ہونے والی جھڑپ میں زخمی ہوگئے ہیں جس سے افغان طالبان کے درمیان موجود خلیج واضح ہوگئی ہے۔

افغانستان کے نائب صدر کے ترجمان سلطان فیضی نے فرانسیسی خبر رساں ادارے کو بتایا ہے کہ ملا منصور شدید زخمی ہے اوراسے اسپتال منتقل کیا گیا ہے اورابھی معلوم نہیں کہ وہ زخموں سے جانبر ہوئے کہ نہیں۔

افغان انٹلی جنس ذرائع اور ایک شدت پسندنے ملا منصور کے زخمی ہونے کی اطلاعات کی تصدیق کی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ جھڑپ میں چار افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ متعدد زخمی ہیں۔

ذرائع نے یہ بھی کہا ہے کہ طالبان کا یہ اجلاس طالبان رہنماعبداللہ سرحدی کے گھر پر منعقد ہوا تھا جس میں کسی معاملے پراختلاف ہوا اورعبداللہ سرحدی نے فائرنگ کردی۔

عبداللہ سرحدی کو 2001 میں امریکہ نے گرفتارکیا تھا اور وہ گوانتانا مو جیل میں قید بھی رہے ہیں تاہم بعد ازاں امریکہ نے انہیں رہا کردیا تھا۔

دوسری جانب طالبان کےترجمان نے ایسے کسی واقعے کے پیش آنےکی تردید کری ہے۔

ملا منصور کو رواں سال ملا عمرکے مرنے کی خبرعام ہونے بعد افغان طالبان کا نیا امیر مقررکیا گیا تھا، ملا عمر افغان طالبان کو دو دہائیوں سے زائد عرصے تک سربراہی کرتے رہے تھے۔

ملا منصور کی نامزدگی کے فوری بعد طالبان میں اعلیٰ سطح پرشدید اختلافات پیدا ہوگئے تھے اورکئی اہم طالبان رہنماوٗں نے ملا منصور کی قیادت تسلیم کرنے سےانکارکردیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں