افغانی کرکٹرکو پاکستان کے خلاف نازیبا الفاظ ادا کرنے پر زدوکوب کیا گیا -
The news is by your side.

Advertisement

افغانی کرکٹرکو پاکستان کے خلاف نازیبا الفاظ ادا کرنے پر زدوکوب کیا گیا

پشاور: افغان قومی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی شفیق اللہ شفیق نے خیبر پختونخوا کی پشاور یونیورسٹی میں جاری کرکٹ ٹورنامنٹ کے دوران افغانی جھنڈا لہرانے پرہنگامہ آرائی شروع ہو گئی۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ خیبر پختونخواہ کے دارالحکومت پشاور میں ہونے والے ایک میچ کے دوران افغانی کرکٹر شفیق اللہ شفیق نے افغانی جھنڈا لہرا دیا اور پاکستان کے خلاف ناذیبا بات کردی جس سُن کر اسٹیڈیم میں موجود شائقین نے افغانی کرکٹر کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

بین الاقوامی جریدے ٹربیون کی رپورٹ کے مطابق پشاور یونیورسٹی کے ایک طالب علم اور عینی شاہد نے بتایا کہ شفیق اللہ شفق نے میچ کے دوران افغان جھنڈا لہراتے ہوئے پاکستان کے خلاف سخت اور نامناسب زبان استعمال کی جس پر وہاں موجود لوگ مشتعل ہو گئے اور گراؤنڈ میں ہی افغانی کرکٹرکو زدکوب کیا گیا۔

اس حوالے سے پاکستان کے ایک افغان طالب علم رہنما خالد امیری کا سوشل میڈیا پر کہنا ہے کہ یہ واقعہ پاکستان میں بڑھتی ہوئی عدم برداشت ظاہر کرتا ہے۔

افغان طالب علم رہنما نے انکشاف کیا کہ افغانی کرکٹر شفیق اللہ افغان بورڈ کی اجازت کے بغیر پاکستان کرکٹ کھیلنے آئے ہیں۔

یاد رہے رمضان کی آمد سے ہی کالجوں اور جامعات میں نائیٹ کرکٹ ٹورنامنٹ شروع ہو جاتے ہیں،اسی قسم کا ایک ٹورنامنٹ پشاور یونیورسٹی میں منعقد کیا گیا تھا جس میں افغانی کرکٹر شفیق اللہ شفیق نے خصوصی شرکت کی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں