The news is by your side.

افغانستان کا امریکی ڈرون آپریشن کیلئے پاکستانی فضائی حدود کے استعمال کا الزام

کابل :افغانستان نے امریکی ڈرون آپریشن کیلئے پاکستانی فضائی حدود کے استعمال کا الزام عائد کردیا۔

تفصیلات کے مطابق طالبان حکومت نے پاکستان پر الزام عائد کیا ہے کہ امریکی ڈرونز کو افغانستان میں حملے کے لیے پاکستان نے اپنی فضائی حدود استعمال کرنے کا اجازت دی۔

طالبان کے قائم مقام وزیر دفاع ملا محمد یعقوب نے کہا کہ اطلاعات کے مطابق ڈرونز پاکستان کے راستے افغانستان میں داخل ہوئے، امریکی ڈرونز نے پاکستانی کی فضائی حدود استعمال کی۔

دوسری جانب پاکستان نے افغان قائم مقام وزیرِ دفاع کے الزام پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

پاکستان کی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ بغیر ثبوت کے ایسے الزامات افسوسناک اور سفارتی عمل کے منافی ہیں، تمام ریاستوں کی خود مختاری اور علاقوں کی سالمیت پر یقین رکھتے ہیں۔

یاد رہے اس سے قبل بھی ترجمان دفترخارجہ عاصم افتخار نے اس بات کی سختی سے تردید کرتے ہوئے کہا تھا کہ القاعدہ سربراہ ایمن الظواہری کے خلاف کارروائی میں پاکستان کی فضائی حدود استعمال ہوئی ہے۔

واضح رہے کہ امریکا کے افغانستان میں ڈرون حملے میں القاعدہ کا سربراہ ایمن الظواہری مارا گیا تھا، ایمن الظواہری نے اسامہ بن لادن کے بعد القاعدہ کی قیادت سنبھالی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں