The news is by your side.

Advertisement

آغا سراج درانی کی فیملی نے نیب کو گھر میں مشروط داخلے کی اجازت دے دی

کراچی: آغا سراج درانی کی فیملی نے نیب کو گھر میں مشروط طور پر داخلے کی اجازت دے دی۔

تفصیلات کے مطابق اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کی گرفتاری کے لیے نیب نے کئی مقامات پر چھاپے مارے، کراچی میں نیب کی ٹیم گرفتاری کے لیے ان کی رہائش گاہ پہنچی، جہاں وہ گھر کے باہر کئی گھنٹوں تک موجود رہے۔

سیکیورٹی گارڈز نے نیب اہل کاروں کو گھر کے اندر جانے سے روکے رکھا، گھر کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے اُن کے بیٹے آغا شہباز درانی نے نیب کو گھر میں داخلے کی مشروط اجازت دے دی۔

آغا سراج درانی کے بیٹے نے کہا ایک لیڈی کانسٹیبل سرچ وارنٹ کے ساتھ گھر میں آ کر پوری تلاشی لے سکتی ہے، لیکن کسی مرد اہل کار کو اندر آنے کی اجازت نہیں دوں گا۔

انھوں نے کہا ماضی میں نیب نے گھر میں داخل ہو کر خواتین کو زد و کوب کیا تھا، نیب والے سمجھتے ہیں کہ وہ قانون سے بالا تر ہیں۔

ناجائز اثاثے بنانے کا الزام، آغا سراج درانی کی درخواست ضمانت مسترد

شہباز درانی نے باہر آ کر کارکنوں کو آغا سراج درانی کا پیغام بھی پہنچایا، کہا کسی بھی مرد کو گھر آنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

واضح رہے کہ سندھ ہائی کورٹ نے آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس میں آغا سراج درانی سمیت 8 ملزمان کی درخواست ضمانت مسترد کی تھی،جب کہ ان کی اہلیہ اور بیٹوں کی ضمانت منظور کر لی گئی ہے، جس کے بعد نیب کی ٹیم آغا سراج درانی کے گھر تلاشی کے لیے پہنچی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں