The news is by your side.

Advertisement

پاکستان نے افغانستان جنگ کی بھاری قیمت ادا کی ، وزیرداخلہ احسن اقبال

وزیرداخلہ احسن اقبال نے امریکا کے ڈومور کے مطالبے پر دو ٹوک پیغام دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے افغانستان جنگ کی بھاری قیمت ادا کی ملک میں شدت پسندوں کے ننانوے فیصد ٹھکانے تباہ کر دیےگئےہیں، ملک میں امن تیزی سے بحال ہو رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر داخلہ احسن اقبال نے انسانی اسمگلنگ سے متعلق کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے افغان جنگ کی بھاری قیمت ادا کی، افغان جنگ کے بعد پاکستان میں دہشتگردی اور اسمگلنگ کی لہر آئی ، اسامہ بن لادن کو ہم سے ہمارے اتحادیوں نے متعارف کرایا تھا، افغان جنگ کے بعدنائن الیون واقعے سے بھی پاکستان کو نقصان پہنچا۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ آج کا پاکستان دوہزار کے پاکستان سے پر امن ا ور بہتر ہے، ملک میں شدت پسندوں کے ننانوےفیصد ٹھکانے تباہ کر دیےگئےہیں ملک میں امن تیزی سے بحال ہو رہا ہے

احسن اقبال نے کہا کہ انسانی سمگلنگ کا مسئلہ بے روزگاری کی وجہ سے پیدا ہوتا ہے، عالمی فریم ورک کےتحت انسانی سمگلنگ منشیات،جرائم کی روک تھام پرکام کیا جارہا ہے، انسانی اسمگلنگ کا تنازعات میں گھرےخطوں سے بڑا تعلق ہے۔

انکا مزید کہنا تھا کہ افغان جنگ کی وجہ سےہمیں متعددمسائل کاسامنا کرناپڑا، پاکستان 30لاکھ سےزائدافغان مہاجرین کی دیکھ بھال کررہاہے، ملک کی شرح نمو بڑھ رہی ہے بجلی بحران پرکافی حدتک قابو پالیا گیا ہے۔

وزیرداخلہ نے مزید کہا کہ ہم نے سویت یونین کےخلاف جنگ لڑی معاشرے کوآج بھی افغان جنگ کےباعث مسائل کاسامنا ہے، کلاشنکوف کلچر اور منشیات افغان جنگ کےنتیجےمیں ہمیں ملے۔


مزید پڑھیں : امریکی وزیر خارجہ ٹلرسن کا پاکستان سے ڈومورکا مطالبہ


یاد رہے کہ امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹلرسن نے ڈومور کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ پاکستان دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کرے، اب پاکستان اور امریکا کے درمیان تعلقات انسداد دہشت گردی کے خلاف کارروائی سے مشروط ہوں گے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں