The news is by your side.

Advertisement

دھرنا دے کر پولیس کارروائیوں کو روکا نہیں جا سکتا، مشتاق مہر

کراچی : ایڈیشنل آئی جی مشتاق مہرکا کہنا ہےکہ دھرنادے کر پولیس کو چھاپہ مار کارروائیاں کرنے سے نہیں روکا جا سکتا ہے بلا تفریق آپریشن جاری رہے گا۔

پی او آفس میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ایڈیشنل آئی جی مشتاق مہر نے کہا کہ ملیر کی صورت حال کو ذمہداری اور سنجیدگی سے دیکھ رہے ہیں صورت حال کو بغیر کسی جانی و مالی نقصان کے کنٹرول کرنا چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ دھرنا دینے والے یہ نہ سمجھیں کہ پولیس اپنی کارروائیاں روک دے گی،سندھ پولیس بلا تفریق کارروائی جاری رکھے گے جس کسی کے خلاف دہشت گردی میں ملوث ہونے یا مذہبی منافرت پھیلانے کے ثبوت ملیں گے ببغیر کسی دباؤ میں آئے بھر پور کارروائی کریں گے۔

ایڈیشنل آئی جی نے کہا معروف سیاسی رہنما فیصل رضاعابدی کے خلاف شواہد موجود ہیں اور اسلحہ بھی بر آمد ہوا ہے جس میں سے ایک ایس ایم جی گن غیر قانونی بھی ہے تمام شواہد کی روشنی میں مزید کارروائی کریں گے۔

ایک سوال کے جواب میں اُن کا کہنا تھا کہ کراچی میں حالیہ ٹارگٹ کلنگ میں انتہا پسند گروپ ملوث ہیں جس کے واضح شواہد موجود ہیں اور انہی شواہد کی روشنی میں سندھ پولیس کارروائی کر رہی ہے اور کسی بھی گروپ کو شہر کے امن و امان کی صورت حال کو تباہ کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

ایک سوال کے جواب میں ایڈیشنل آئی جی نے صحافیوں کو بتایا کہ عزیز آباد سے ملنے والے اسلحہ کی فارنزک رپورٹ جلد آجائے گی جسے میڈیا کے ذریعے عوام کے سامنے لایا جائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں