The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس، اندرون ملک پروازوں‌ کے کرایوں‌ میں‌ حیران کن کمی کردی گئی

بیجنگ: چین میں نیم سرکاری اور نجی ایئرلائن کی جانب سے کرونا وائرس کے سبب پروازوں کے کرایوں میں حیران کن کمی کرتے ہوئے ایک طرف کا کرایہ 15 درہم (630 پاکستانی روپے) کردیاگیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق چین میں کوویڈ 19 وائرس پھیلے جانے کے بعد اب تک چینی ایئرلائنز اور ہوائی اڈے ایک دن میں تقریباً 10 ہزار پروازوں کو منسوخ کرنے کے ساتھ سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔

وائرس سے جہاں دیگر کاروبار متاثر ہوئے وہیں ہوا بازی کی صنعت پر بھی بہت زیادہ دباؤ پڑا ہے اور ایئرلائنز کی اندرون ملک پروازوں کی مانگ کو بڑھانے کے لیے قیمتوں میں کمی کی گئی ہے۔

پروازوں کی قیمتوں میں کمی کے بعد شنگھائی سے چونگ کنگ تک ایک طرفہ تین گھنٹے کی ہوائی ٹکٹ کو صرف 29 یوآن کردیا گیا ہے، چین کی سب سے کم قیمت والے کیریئر اسپرنگ ایئرلائن کی جانب سے اپنے فلائر کلب کے متواتر ممبروں کے لیے پیش کیا جارہا ہے۔

مزید پڑھیں: کروناوائرس: وہ 5 ممالک جہاں اماراتی شہریوں کے جانے پر پابندی عائد

اسی طرح شنگھائی سے ہاربن تک کا ایک طرفہ ٹکٹ جس میں 1600 کلو میٹر کا فاصلہ ہے اس کی قیمت صرف 69 یوآن ہے، شینزین ایئرلائئنز جو سرکاری کمپنی کیریئر ایئرچین کی ایک ڈویژن ہے، چونگ کنگ کو ایک طرفہ ٹکٹ کی پیش کش کررہی ہے جس کی قیمت صرف 100 یوآن ہے جس کی قیمت اس سے قبل 1940 یوآن تھی۔

رپورٹ کے مطابق جنوری اور 14 فروری کے درمیان جس میں قمری نئے سال کی تعطیلات بھی شامل ہیں، چین میں اوسطاً یومیہ مسافروں کی آمدورفت صرف 470000 تھی جو گزشتہ سال کی اسی مدت سے 75 فیصد کمی کی نمائندگی کرتی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں