The news is by your side.

Advertisement

ایئرپورٹ منیجرز نے سی اے اے اور اے این ایف کیخلاف شکایات کے انبار لگا دیئے

کراچی : ایئرپورٹ منیجرز کانفرنس میں منیجرز نے شکوہ کیا کہ سی اے اے اور اے این ایف کا عملہ تعاون نہیں کرتا، سیکریٹری ایوی ایشن شاہ رخ نصرت کے سامنے منیجرز نے شکایات کے انبار لگادیئے۔

تفصیلات کے مطابق سیکریٹری ایوی ایشن شاہ رخ نصرت کی صدارت ایئرپورٹ منیجر کانفرنس ک اانعقاد کیا گیا، ایئرپورٹ منیجرز کانفرنس کی اندرونی کہانی اے آر وائی نیوز نے حاصل کرلی، کانفرنس میں ایئرپورٹ منیجرز نے سیکریٹری ایوی ایشن کے سامنے شکایات کے انبار لگادیے۔

ایئرپورٹس منیجرز کا کہنا تھا کہ مختلف ایئرپورٹس پر اداروں کے درمیان رابطے کا فقدان ہے، وفاقی حکومت کی جانب سے ایئرپورٹس پر قائم ون ونڈو کاؤنٹرپر اداروں کے اہلکار موجود نہیں ہوتے، بیرون ملک جانے والے مسافروں کو پریشانی کاسامنا رہتا ہے۔

سی اے اے کے جوائنٹ سرچ بیگجز کاؤنٹر پر بھی کسٹم اور اے این ایف تعاون نہیں کررہے، ایئرپورٹس منیجرز کا مزید کہنا تھا کہ جوائنٹ سرچ بیگیجز کاؤنٹر پر کسٹم اور اے این ایف اپنی انا کا مسئلہ بناتے ہیں۔

ایف آئی اے کے کاؤنٹر پر افرادی قوت کی کمی کاسامنا ہے، کاؤنٹرز پر مسافروں کا رش ہوتا ہے لیکن ایف آئی اے کا عملہ سست روی سے مسافروں کا امیگریشن کرتا ہے امیگریشن کاؤنٹرز پر مسافروں کو طویل قطاریں لگ جاتی ہیں چھ سے سات کے بجائے صرف دو پر عملہ موجود ہوتا ہے۔

کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سیکریٹری ایوی ایشن شاہ رخ نصرت نے کہا کہ اسلام آباد، لاہور اور کراچی ایئرپورٹس پر سب سے زیادہ عوامی شکایات موصول ہوتی ہیں ،وزیراعظم کی واضح ہدایت ہے کہ تمام ایئرپورٹس پر مسافروں کو زیادہ سے زیادہ سہولیات فراہم کی جائیں۔

جو ادارے سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ساتھ تعاون نہیں کررہے ان اداروں کے سربراہان کو خطوط لکھے جائیں گے، سیکریٹری ایوی ایشن نے ہدایت دی کہ تمام ایئرپورٹس پر ادارے ایئرپورٹ منیجر کے ساتھ رابطے میں رہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں