The news is by your side.

Advertisement

شام میں فضائی بمباری، چار بچوں سمیت 15 شہری ہلاک

ادلب: شام میں ایک بار پھر فضائی بمباری کے نتیجے میں چار بچوں سمیت 15 افراد مار گئے۔

تفصیلات کے مطابق شامی صوبے ادلب میں اسد حکومت کے دستوں کے ایک فضائی حملے میں پندرہ افراد مارے گئے، جن میں چار بچے بھی شامل ہیں۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق رواں سال کے آغاز سے اب تک شامی حکومت اور اتحادی افواج کی جانب سے فضائی بمباریوں کے باعث سینکڑوں عام شہری مارے جاچکے ہیں۔

سیریئن آبزرویٹری نے ایک بیان میں کہا کہ معرة النعمان نامی علاقے میں کی گئی اس فضائی کارروائی میں مجموعی طور پر پندرہ ہلاکتیں ہوئیں، اس واقعے میں تیس افراد زخمی بھی ہوئے۔

شامی دستوں نے اپریل میں روسی فضائیہ کے تعاون سے صوبے حماء اور ادلب میں باغیوں کے خلاف بڑی کارروائی کا آغاز کیا تھا۔ شدت پسندوں پر کیے گئے حملوں میں عام شہریوں کی بھی ہلاکتیں ہوئیں۔

گذشتہ ماہ شام میں اتحادی افواج کی جانب سے ایک گاﺅں پر کی جانے والی بمباری سے سات بچوں سمیت چودہ افراد جاں بحق ہوئے تھے۔ چار ماہ میں اب تک 520 سے زائد بے گناہ افراد فضائی بمباریوں میں جان کی بازی ہار چکے ہیں۔

شام : اتحادی افواج کی بمباری : 7 بچوں سمیت 14 شہری جاں بحق

یاد رہے کہ رواں سال جون میں بھی شمال مغربی شام اور حلب میں اسدی فوج اور مسلح گروپوں کے درمیان ہونے والی لڑائی میں بارہ عام شہری مارے گئے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں