عدالت نےعائشہ باوانی گرلز کالج فوری کھولنے کا حکم دے دیا -
The news is by your side.

Advertisement

عدالت نےعائشہ باوانی گرلز کالج فوری کھولنے کا حکم دے دیا

کراچی : سندھ ہائیکورٹ نے عائشہ باوانی کالج فوری کھولنے کاحکم دیتے ہوئے فریقین کو 23 ستمبر کیلئے نوٹس جاری کردیا، کالج میں درس وتدریس پیر سے شروع ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں درس گاہ سے محروم تین ہزارطلبہ کی دُہائیاں رنگ لے آئیں۔ سندھ ہائیکورٹ نے عائشہ باوانی کالج کو سیل کرنے کاحکم معطل کردیا۔

عائشہ باوانی کالج کی ملکیت کے معاملے پر سندھ ہائیکورٹ نے سول جج کے فیصلے کو معطل کر کے کالج فوری کھولنے کا حکم دے دیا عدالت نے انتظامیہ کی درخواست پر کالج فوری کھولنے کاحکم دیتے ہوئے فریقین کوتئیس ستمبر کیلئے نوٹس جاری کردیا۔

کالج میں درس و تدریس کا عمل پپر سے شروع ہوگا، کالج انتظامیہ نے نوٹس لگادیا، سندھ پروفیسر اور لیکچرزایسوسی ایشن کے صدرنے کالج کی بندش کو محمکہ تعلیم کی غفلت قرار دیا۔

کالج سیل ہونے کےباعث طالب علم پریکٹیکل امتحان بھی نہ دے سکے، طلبا نے درسگاہ کی بندش کے باعث ایک اور دن تپتی سڑک پرگزرا، پرعزم اساتذہ نے علم کے پروانوں کو آج بھی سڑ ک پرہی تعلیم دی۔


مزید پڑھیں : کراچی:عائشہ باوانی کالج کوسیل کردیا گیا


یاد رہے کہ سندھ حکومت نے درخواست میں مؤقف اختیار کیا تھا کہ عائشہ باوانی اسکول کیلئے وفاقی حکومت نے زمین لیز پر الاٹ کی جس دور میں کراچی دارالحکومت تھا۔

بعد ازاں ذوالفقارعلی بھٹو کے دور حکومت میں عائشہ باوانی اسکول کو قومی تحویل میں لے لیا گیا، کالج کی پراپرٹی عائشہ باوانی ٹرسٹ کی نہیں بلکہ حکومت سندھ کی ملکیت ہے جس پر سندھ ہائی کورٹ نے رینٹ کنٹرولر کے فیصلے کو معطل کرکے حکم امتناع جاری کردیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں