The news is by your side.

Advertisement

کشمیرکے حل کے بغیر پاک بھارت بہترتعلقات ممکن نہیں، اعتزازاحسن

لاہور : پیپلز پارٹی کے رہنماء سینیٹر اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ دہشت گردی کو پھیلنے سے روکنا ہو گا، مسئلہ کشمیر حل کئے بغیر پاکستان اور بھارت کے تعلقات معمول پر نہیں آ سکتے۔

لاہور میں سیفما سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کے رہنماء سنیٹر اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ دہشت گردی ناسور کی طرح پھیلتی جا رہی ہے۔

پٹھان کوٹ ایئربیس پر حملے کی تحقیقات مشترکہ ٹیم کو کرنی چاہیئے، باچا خان یونیورسٹی پر حملے کا الزام بھارت پر لگانا قبل از وقت ہو گا۔

انہوں نے کہا کہ 1965 کی جنگ، کارگل اور مشرقی پاکستان کے المیئے کے باوجود بھی مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوا، جنگ ہمیشہ مسائل پیدا کرتی ہے، قوموں کی ترقی میں جواب سے زیادہ سوال کرنا اہم ہوتا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ہندو ہمارے عزیز ہیں لیکن ہم نے انہیں دشمن بنا رکھا ہے، کوئی مذہب بحیثیت قوم دشمن نہیں ہوتا۔

سابق وزیر خارجہ خورشید قصوری نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اور بھارت کے پاس مسئلہ کشمیر پر مذاکرات کے سوا کوئی حل نہیں ہے۔

مسئلہ کشمیر پر جب بھی بات چیت کامیابی کے قریب پہنچتی ہے تو کوئی اہم واقعہ ہو جاتا ہے۔ جس سے سارا تسلسل ٹوٹ جاتا ہے۔ ایسے واقعات کا رونما ہونا کسی اسکرپٹ کا حصہ لگتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مسئلہ کشمیر پر سیاسی حکومتوں کو ہمیشہ فوج کی حمایت حاصل رہی ہے۔ اس موقع پر مختلف قراردادوں کی منظوری دیتے ہوئے دہشت گردی کے واقعات کی مذمت کی گئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں