The news is by your side.

Advertisement

جس ویڈیو کا فرانزک ہونا ہے، وہ تو ن لیگ نے الماری میں رکھی ہوئی ہے: اعتزاز احسن

لاہور: پیپلز پارٹی کے سینئر رہنمااعتزاز احسن نے کہا ہے کہ اگر ویڈیو عدالت میں پیش نہیں کی جاتی، تو پھر میاں صاحب ن لیگ کے قیدی ہوں گے۔

ان خیالات کا اظہار انھوں نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام آف دی ریکارڈ میں گفتگو کرتے ہوئے کیے۔ انھوں نے کہا کہ فرانزک جس چیز کا ہونا ہے، وہ تو ن لیگ نے الماری میں رکھی ہوئی ہے۔

 اگر نوازشریف کی بےگناہی کا ثبوت آئے ہیں، تو ن لیگ کو بےچین ہونا چاہیے، ن لیگ کو چاہیے کہ وہ ثبوت فوری عدالت میں پیش کر دے۔

انھوں نے کہا کہ نوازشریف کے لئےمریم اکیلی کھڑی ہے، اس کے بھائی بھی ساتھ چھوڑ گئے، میں سمجھتاہوں مریم بی بی بھی مس گائیڈ ہورہی ہیں،

انھوں نے کہا کہ فرانزک اصل ویڈیو کا ہونا ہے، ویڈیو کے صرف کچھ حصے میڈیا پر دکھا گئے، شاہد خاقان نے یہ کیسے کہہ دیا کہ فرانزک ہوگئی، ویڈیو عدالت میں پیش ہی نہیں کی گئی، تو فرانزک کیسے ہوگیا۔

مزید پڑھیں: ویڈیو پر عدلیہ کو نوٹس لینا چاہیے: اٹارنی جنرل انور منصور خان

اعتزاز احسن نے کہا کہ میاں صاحب جوڈیشل آرڈرپرقید ہیں، انتظامی بنیاد پر رہا نہیں کیا جا سکتا، ویڈیو کا فرانزک ایفی ڈیوڈ کے ساتھ عدالت میں پیش ہوگا، تو ہی کچھ ہوسکتا ہے۔ ویڈیو میں موجود شخص اور ناصر بٹ کو عدالت میں پیش ہونا ہوگا، ویڈیو ایڈٹ کرنے والے کو بھی عدالت میں پیش ہوکرحلف اٹھانا ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ اس معاملے پر ہائی کورٹ کے پاس سوموٹو لینا کا اختیار نہیں ہے، عدالت میں ویڈیو پر پٹیشنرسمیت تمام لوگوں کےحلف نامےجمع ہوں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں