افغانستان دہشت گرد عناصر کو اپنی سرزمین سے نکالے، اعزاز چوہدری afghanistan
The news is by your side.

Advertisement

افغانستان دہشت گرد عناصر کو اپنی سرزمین سے نکالے، اعزاز چوہدری

واشنگٹن : امریکہ میں تعینات پاکستان کے سفیر اعزاز احمد چوہدری نے کہا ہے کہ افغانستان کے مسئلے کا فوجی نہیں بلکہ سیاسی ہے جس کا حل تلاش کرنا وقت کی سب سے اہم ضرورت ہے۔

امریکہ میں تعینات پاکستان کے سفیر اعزاز احمد چوہدری نے پاکستانی سفارت خانے میں منعقدہ اپنی پہلی پریس کانفرنس میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ پاک افغان سرحد کی دونوں جانب دہشت گردوں کی نقل و حرکت کو روکنے کے لئے پاک افغان سرحد کی نگرانی ضروری ہے۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان میں قیام امن کے لیے حل عسکری انداز میں نہیں ڈھونڈنا چاہیے بلکہ حل سیاسی اس کے جملہ مسائل کا پائیدار اور مستحکم حل ہے جس کے لیے پاکستان ہر ممکن کردار ادا کرنے کو تیار ہے

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ امریکا کی نئی انتظامیہ پاکستان کے ساتھ اچھے تعلقات کی خواہاں ہے یہی وجہ ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر منتخب ہونے کے بعد وزیر اعظم نواز شریف کے ساتھ فون پر خوشگوار گفتگو کی اور ملاقات کی حامی بھری۔

اسامہ بن لادن کے معاملے پر پوچھے گئے سوال کے جواب میں پاکستانی سفیر نے کہا کہ شکیل آفریدی کے معاملے پر پاکستان اور امریکا کا اپنا اپنا مئوقف ہے اور پاکستان آج بھی اپنے دو ٹوک، اٹل اور واضح موقف پر قائم ہے۔

انہوں نے کہا کہ کچھ دہشت گرد عناصر افغان سرزمین استعمال کرتے ہوئے پاکستان کے خلاف کارروائیاں کرتے ہیں اور پاک افغان تعلقات میں خرابی کا باعث بنتے ہیں اس افغانستان کو چاہیئے کہ ایسے عناصر کو ملک سے نکال باہر کرے۔

پاکستانی سفیر اعزاز چوہدری نے کہا کہ سرحد کے دونوں اطراف دہشت گردوں کی نقل و حرکت کو روکنے کے لئے پاک افغان سرحد کی نگرانی ضروری ہے، جس کے لئے پاکستان اور افغان حکام کو مل کر کام کرنے کی ضرورت ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں