The news is by your side.

بالی ووڈ اداکار اکشے کمار کو اسپیشل انویسٹی گیشن ٹیم نے طلب کرلیا

ممبئی: بالی ووڈ اداکار اکشے کمار کو بھارتی پنجاب کے ضلع فرید کوٹ میں تین سال قبل ہونے والے فسادات کی تحقیقات کرنے والی انویسٹی گیشن ٹیم نے طلب کرلیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق تحقیقاتی ٹیم 2015 میں سکھوں کی مذہبی کتاب گرو گرنتھ کے صفحات پھٹے ہوئے ملنے کے بعد ہونے والے فسادات کی تحقیقات کررہی ہے، فسادات کے دوران بہبل کالان میں فائرنگ سے 2 افراد ہلاک ہوئے تھے جس کا الزام گرمیت رام سنگھ پر لگایا گیا تھا۔

فسادات کی تحقیقات کرنے والی ٹیم نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ  ڈیڑہ سچا سودا کے چیف کی فلم ایم ایس جی کی ریلیز کے سلسلے میں گرمیت رام نے اکشے کمار کے ممبئی فلیٹ میں ملاقات کی تھی۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ یہ ملاقات گرمیت رام سنگھ کو اس کیس میں معافی دئیے جانے سے پہلے ہوئی تھی۔

اکشے کمار کا کہنا ہے کہ کئی سال سے وہ پنجابی کلچر اور سکھ ازم کی بھرپور تاریخ کے فروغ کے لیے سنگھ از کنگ، کیسری جیسی فلمز بنارہے ہیں، مجھے پنجابی ہونے پر فخر ہے اور میں سکھ مذہب کا بے حد احترام کرتا ہوں۔

ان کا کہنا تھا کہ وہ جیل میں قید گرمیت رام سے کبھی نہیں ملے ہیں،  ایسا کوئی کام نہیں کرسکتا جس سے پنجابی بہنوں اور بھائیوں کے جذبات مجروح ہوں۔

پانچ رکنی تحقیقاتی ٹیم نے اکشے کمار کو 21 نومبر کو طلب کیا ہے اور پنجاب کے سابق وزیراعلیٰ پرکاش سنگھ اور ان کے بیٹے سکھبیر سنگھ بادل کو 19 نومبر کو طلب کیا ہے۔

واضح رہے کہ اکشے کمار ان دنوں اپنی نئی آنے والی فلم 2.0 کی شوٹنگ میں مصروف ہیں، ایکشن سے بھرپور اس روبوٹک فلم میں اکشے کمار سپر ولن کا کردار ادا کررہے ہیں جن کو پراسرار مخلوق سے ٹکراتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

تمل زبان میں‌ شوٹ ہونے والی یہ فلم 29 نومبر کو 13 زبانوں میں دنیا بھر میں ریلیز کی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں