The news is by your side.

Advertisement

علیم خان کی ڈیڑھ کروڑ روپے مالیت کی قیمتی گھڑی کوٹ لکھپت جیل سے چوری

لاہور : کوٹ لکھپت جیل لاہور میں قید پی ٹی آئی رہنماء علیم خان کی قیمتی گھڑی چوری ہوگئی، عبدالعلیم خان نے جیل حکام کو ذمہ دار قرار دیا جبکہ جیل ذرائع نے واقعہ کو علیم خان کی ذاتی غفلت قرار دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے رہنماء عبدالعلیم خان کی قیمتی گھڑی کوٹ لکھپت جیل سے چوری ہوگئی، جس پر جیل میں کھلبلی مچ گئی۔

آئی جی جیل خانہ جات نے واقعہ کی انکوائری کا حکم دے دیا ہے ، ذرائع کے مطابق گھڑی کی مالیت ڈیڑھ کروڑ روپے ہے، علیم خان کو یہ گھڑی ان کے والد نے تحفے میں دی تھی۔

ذرائع کا کہنا ہے عبدالعلیم خان نے جیل حکام کو ذمہ دار قرار دیا ہے، جیل مینوئل کے مطابق قیدی قیمتی اشیا نہیں رکھ سکتے جبکہ جیل ذرائع نے واقعہ کو علیم خان کی ذاتی غفلت قرار دیا ہے، جس کی تحقیقات جاری ہیں۔

یاد رہے لاہور کی احتساب عدالت میں عبدالعلیم خان کے خلاف آمدن سے زائد اثاثوں اور آف شور کمپنی کیس کی سماعت ہوئی ، علیم خان کو جج جواد الحسن کے روبرو پیش کیا گیا۔

مزید پڑھیں : علیم خان کے جوڈیشل ریمانڈ میں 13 مئی تک توسیع

عدالت نے نیب سے استفسار کیا کہ حتمی رپورٹ کب جمع کروائیں گے، جس پر نیب پراسیکیوٹر وارث جنجوعہ نے عدالت کو آگاہ کیا کہ ابھی رپورٹ تیار ہو رہی ہے۔ عدالت نے دوبارہ پوچھا کہ بندہ جیل میں ہے، بتائیں رپورٹ کب تک پیش کرنی ہے۔

نیب پراسیکیوٹر نے بتایا کہ کیس کے بہت سے ملزمان ملک سے فرار ہیں، اس لیے تفتیش مکمل نہیں ہوئی۔

عدالت نے عبدالعلیم خان کے جوڈیشل ریمانڈ میں 13 مئی تک توسیع کرتے ہوئے نیب کو حکم دیا کہ آئندہ سماعت پر رپورٹ جمع کروائی جائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں