شامی فوج کا 6سالہ جھڑپ کے بعد حلب پر مکمل کنٹرول حاصل کرنے کا دعویٰ، جشن کا سماں -
The news is by your side.

Advertisement

شامی فوج کا 6سالہ جھڑپ کے بعد حلب پر مکمل کنٹرول حاصل کرنے کا دعویٰ، جشن کا سماں

حلب : شامی فوج نے باغیوں سے چھ سالہ جھڑپ کے بعد حلب پر مکمل کنٹرول حاصل کرنے کا دعویٰ کیا ہے، بشارالاسد کے حامی جشن مناتے ہوئے سڑکوں پر نکل آئے۔

حلب جو کل تک بمباری اور فائرنگ سے گونجتا تھا، آج وہاں جشن کا سماں ہے، شامی فوج کی باغیوں سے چھ سالہ جھڑپ کے بعد حلب پر مکمل کنٹرول حاصل کرنے کا دعویٰ کے بعد لوگوں کی بڑی تعداد سڑکوں پر نکل آئی اور جشن منایا بشارالاسد کے حق میں نعرے لگائے، اس موقع پر گاڑیاں ہارن بجاتی اور شہر بھر میں دوڑتی دکھائی دیں، جب کہ بچوں نے شامی قومی پرچم کے رنگوں کو اپنی گالوں پر مل رکھا تھا۔

sy1

شامی فوج کی طرف سے پورے حلب پرکنٹرول کے دعوے کا اعلان ایک ایسے وقت میں کیا گیا جب مشرقی حلب سے انخلاء کے معاہدے کے تحت باغیوں کا آخری قافلہ بھی شہر سے باہر نکل گیا ہے۔

syira-1

دوسری جانب غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق اقوام متحدہ کی نگرانی میں شام کے شہر حلب سے باغیوں اور شہریوں کا انخلا جاری ہے۔

sy2

حال ہی میں روس،ایران اور ترکی نے حلب میں محصور شہریوں اور باغیوں کو محفوظ راستہ دینے کے ایک معاہدے سے اتفاق کیا تھا۔

صدربشارالاسد نے اپنے پیغام میں کہا کہ روس اور ایران کی مدد سے حلب میں باغیوں کوشکست دی، ایک ہفتے تک جاری رہنے والے آپریشن میں چونتیس ہزار زائد شہری اور باغیوں کا انخلا کیا گیا۔

روس کے وزیردفاع کا کہنا ہے کہ روسی فضائیہ کے حملوں میں پینتیس ہزار سے زائد باغی ہلاک اور ان کے کئی ٹھکانوں کو تباہ کیا گیا ہے۔

یاد رہے قریب ساڑھے چار سال تک اس شہر پر باغیوں کا قبضہ تھا، تاہم کچھ عرصہ قبل حکومتی فورسز نے اس شہر کو باغیوں سے چھڑانے کے لیے آپریشن کا آغاز کیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں