The news is by your side.

Advertisement

علی رضا عابدی قتل کیس، لندن، ساؤتھ افریقا نیٹ ورک ملوث ہوسکتا ہے، ایس ایس پی

کراچی: ایس ایس پی پیر محمد شاہ نے کہا ہے کہ ایم کیو ایم کے سابق رہنما علی رضا عابدی کے قتل میں لندن، ساؤتھ افریقا نیٹ ورک کے ملوث ہونے کا امکان ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ایس ایس پی ضلع جنوبی پیر محمد شاہ نے کہا کہ علی رضا عابدی کیس میں آہستہ آہستہ آگے جارہے ہیں اور مزید تفتیش جاری ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ علی رضا عابدی کیس میں اطلاعات ہیں کہ لندن، ساؤتھ افریقا نیٹ ورک آیا ہوا تھا تاہم معاملے میں مزید حقائق کو بھی دیکھ رہے ہیں۔

واضح رہے کہ ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما فاروق ستار نے کہا تھا کہ علی رضا عابدی کو سازش کے تحت قتل کیا گیا، قاتلوں کی گرفتاری تک خاموش نہیں بیٹھیں گے اور احتجاج کا سلسلہ جاری رکھیں گے۔

مزید پڑھیں: علی رضا عابدی کے قاتلوں کی گرفتاری تک خاموش نہیں بیٹھیں گے ،فاروق ستار

ان کا کہنا تھا کہ علی رضا عابدی کو سازش کے تحت قتل کیا گیا، کراچی کو بدامنی میں جھونکنے کے لئے علی رضا عابدی کوقتل کیاگیا، علی رضا عابدی کا مشن صاف و پڑھی لکھی ایم کیوایم کا قیام تھا، صوبائی حکومت اپنی ذمہ داری نہیں نبھا رہی۔

واضح رہے کہ 25دسمبر کی شام کوکراچی کے علاقے ڈیفنس میں اپنی رہائش گا ہ کے پاس متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے سابق رہنما علی رضا عابدی نامعلوم موٹر سائیکل سواروں کی فائرنگ سے زخمی ہو گئے تھے انہیں تشویش ناک حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا تھا لیکن وہ جاں بر نہ ہو سکے۔

اس حوالے سے آئی جی سندھ کلیم امام نے وارداتوں میں قابو نہ پانے اور فرائض میں غفلت برتنے پر ڈی آئی جی ساؤتھ جاوید عالم اوڈھو کو عہدے سے ہٹا دیا تھا، آئی جی سندھ نے یہ ذمہ داریاں شرجیل کھرل کو سونپ دینے کے احکامات جاری کیے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں