The news is by your side.

Advertisement

ملک مخالف تقریر، سندھ پولیس کی درخواست پر علی وزیر پشاور سے گرفتار

پشاور: خیبر پختونخواہ پولیس نے پشتون تحفظ موؤمنٹ کے رہنما اوررکن قومی اسمبلی علی وزیر کو گرفتار کرلیا۔

نمائندہ اے آر وائی نیوز  کے مطابق خیبرپختونخواہ پولیس نے علی وزیر کو پشاور کے تھانہ شرقی کی حدود سے اُس وقت گرفتار کیا جب وہ گاڑی میں کہیں جارہے تھے۔

واضح رہے کہ محکمہ داخلہ سندھ اور سندھ پولیس نے محکمہ داخلہ خیبرپختونخواہ کو علی وزیر کی گرفتاری کے لیے درخواست دی تھی کیونکہ رکن قومی اسمبلی کے خلاف سندھ میں ملک مخالف تقریر کا مقدمہ درج ہے جس میں وہ مفرور ہیں۔

کے پی پولیس حکام کے مطابق علی وزیر کی گرفتاری 54 سی آر پی سی کے تحت کی گئی ہے۔ پولیس حکام کے مطابق علی وزیر کو سندھ پولیس کے حوالے کیا جائے گا۔

مزید پڑھیں: علی وزیر کی گرفتاری، سندھ پولیس نے خیبر پختونخواہ حکومت سے مدد مانگ لی

قبل ازیں سندھ پولیس اور محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے علی وزیر کی حوالگی کے حوالے سے خیبرپختونخواہ محکمہ داخلہ کو دو علیحدہ علیحدہ خطوط لکھے گئے۔پولیس نے اپنے خط میں لکھا کہ پی ٹی ایم کی 6 دسمبر کو کراچی میں ہونے والی ریلی میں علی وزیر نے ملک مخالف تقریر کی اور پاک فوج کے خلاف ہرزہ سرائی کی۔

پولیس کی جانب سے بھیجے جانے والے خط میں کہا گیا کہ علی وزیر کے خلاف مقدمہ درج ہے اور وہ مفرور بھی ہے، خیبرپختونخواہ حکومت گرفتاری اور حوالگی کے حوالے سے مدد فراہم کرے۔

دوسری جانب محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے ارسال کیے جانے والے خط میں کہا گیا کہ علی وزیر کو گرفتار کر کے سندھ پولیس کے حوالے کیا جائے۔

علی وزیر کے خلاف درج مقدمہ

علی وزیر کے خلاف درج ہونے والی ایف آئی آر کی کاپی بھی اے آر وائی نیوز نے حاصل کرلی جس میں بتایا گیا ہے کہ رواں ماہ کی 6 تاریخ کو کراچی میں ہونے والے پی ٹی ایم جلسے میں علی وزیر نے خطاب کرتے ہوئے پاکستان اور پاک فوج کے خلاف ہرزہ سرائی کی جبکہ خطاب میں ملک مخالف باتیں بھی کیں۔



Comments

یہ بھی پڑھیں