The news is by your side.

Advertisement

گورنر سندھ پر لگائے جانے والے الزامات بے بنیاد ہیں، ترجمان

کراچی: ترجمان گورنر ہاؤس نے کہا ہے کہ پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ سید مصطفیٰ کمال کی جانب سے عشرت العباد پر لگائے گئے تمام الزامات بے بنیاد اور جھوٹ پر مبنی ہیں۔

گورنر ہاؤس کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں ترجمان نے پاک سرزمین پارٹی کے چیئرمین مصطفیٰ کمال کی جانب سے عشرت العباد پر لگائے گئے الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’’ڈاکٹر عشرت العباد سندھ میں قیام امن اور فلاح و بہبود کے لیے ذمہ داریاں سرانجام دے رہے ہیں‘‘۔

بیان میں کہا گی ہے کہ گورنر سندھ کراچی آپریشن میں بلاتفریق کارروائی کو یقینی بنایا گیا ہے اور ملزموں کے خاتمے تک یہ کارروائی ہر صورت جاری رہیں گی، ترجمان نے مزید کہاکہ کراچی میں جاری آپریشن کو منطقی انجام تک پہنچانے کے لیے گورنر سندھ پرعزم ہیں۔

پڑھیں:  بانی متحدہ کی حمایت پر گورنر کو گرفتار کیا جائے، مصطفیٰ کمال

 قبل ازیں مصطفیٰ کمال نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے گورنرسندھ پر سنگین الزامات عائد کرتے ہوئے کہا تھا کہ کراچی میں ہونے والی قتل و غارت گیری، 12 مئی سمیت دیگر جرائم کے تانے بانے گورنر ہاؤس سے ملتے ہیں۔

مزید پڑھیں:  مصطفیٰ کمال کا ذہنی توازن درست نہیں، ڈاکٹرعشرت العباد

انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ گورنر سندھ کو برطرف کرتے ہوئے ان کا نام ای سی ایل میں شامل کیا جائے اور عشرت العباد کے خلاف تحقیقات کا آغاز کیا جائے۔

دوسری جانب وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے گورنر پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کسی بھی قسم کا بیان دینے سے گریز کرتے ہوئے کہا ہے کہ واقعے کی چھان بین کے بعد کوئی بیان دیا جائے گا جبکہ مشیر اطلاعات سندھ مولا بخش چانڈیو نے کہا کہ ’’گورنر سندھ نفیس آدمی ہیں اُن پر لگائے جانے والے الزامات سے ہمیں تکلیف اور وفاق کو افسوس ہوگا‘‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں