The news is by your side.

Advertisement

کورونا ویکسین کی قیمت ،قومی وزرات صحت نے ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل پاکستان کے خط کا جواب دے دیا

اسلام آباد : ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل پاکستان کے خط کا قومی وزرات صحت نے جواب دے دیا، جواب میں لکھا کہ شہریوں کی سہولت کے لئے حکومت نے طویل مشاورت کے بعد نجی سیکٹر کو ویکسین درآمد کی اجازت دی، جس کا مقصد نجی سیکٹر کی شمولیت سے کم وقت میں زیادہ ویکسی نیشن ہوسکے۔

تفصیلات کے مطابق کوروناویکسین کی قیمت سے متعلق وزارت قومی صحت نے ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل پاکستان کے خط کا جواب میں کہا کہ حکومت کورونا سے نمٹنے کے تمام ممکنہ اقدامات کر رہی ہے ، ایک برس میں کورونا کی روک تھام کے بھرپور اقدامات کیے گئے، گزشتہ ایک سال میں ہیلتھ سسٹم کابنیادی ڈھانچہ بہتربنایا گیا اور کورونا ٹیسٹنگ کی صلاحیت میں اضافہ کیا گیا۔

جوابی خط میں کہا گیا کہ سرکاری و نجی اسپتالوں کےعملےکوکورونا سےنمٹنے کی تربیت دی گئی، کوروناخدشے کے پیش نظر معمرشہریوں کی ویکسی نیشن جاری ہے، دنیانےکورونا کےخلاف پاکستان کے اقدامات کو سراہا ہے۔

وزارت صحت نے خط میں واضح کیا کہ شہریوں کی سہولت کے لئے حکومت نے طویل مشاورت کے بعد نجی سیکٹر کو ویکسین درآمدکی اجازت دی، جس کامقصد نجی سیکٹرکی شمولیت سےکم وقت میں زیادہ ویکسی نیشن ہوسکے گی۔

خط میں بتایا گیا کہ حکومت نے قیمت کے تعین کے بغیرویکسین درآمد کی اجازت دی، قانون میں کورونا ویکسین کی کوئی قیمت مقرر نہیں تھی،ویکسین کی قیمت کا تعین ہارڈ شپ کیٹگری کے زمرے میں کیا ہے۔

خط میں یہ بھی لکھا کہ ڈرگ پرائسنگ پالیسی کےتحت کورونا ویکسین کی قیمت پر نظر رکھی جارہی ہے، نجی شعبہ بڑے پیمانے پر کورونا ویکسین درآمد نہیں کرسکتا،حکومت ریٹیل سطح پر ویکسین کی زیادہ سے زیادہ قیمت کا تعین کررہی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں