The news is by your side.

Advertisement

کراچی‌: محرم الحرام جلوس، متبادل ٹریفک پلان جاری

کراچی: محرم الحرام کے جلوسوں کے پیش نظر شہر قائد کیلئے پولیس نے متبادل روٹ پلان جاری کردیا، جلوس کی گزرگاہوں والی تمام شاہراؤں کو عام ٹریفک کے لیے بند کردیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق محرم الحرام میں ٹریفک کی آمد و رفت کو بحال رکھنے اور عوام کو مشکلات سے بچانے کے لیے ٹریفک پولیس نے 8 تا 10 محرم کا متبادل ٹریفک پلان جاری کردیا۔

محرم الحرام کی 8 سے 10 تاریخوں کے درمیان شہر کے مختلف مقامات پر ماتمی جلوس نکالے جاتے ہیں، سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر جلوسوں کی آمد سے دو روز قبل ہی شاہراوں کو رکاوٹیں لگا کر کے بند کردیا جاتا ہے۔

کراچی میں عاشورہ کا مرکزی ماتمی جلوس نشتر پارک سے برآمد ہوکر کھارادر میں واقع ایرانیہ حسینیہ امام بارگاہ پر پہنچ کر اختتام پذریر ہوتا ہے، جلوس کے تمام راستوں کو  سیل کردیا جاتا ہے جبکہ امن و امان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کے لیے پولیس کی بھاری نفری بھی موجود رہتی ہے۔

مزید پڑھیں: محرم الحرام: سرکاری چھٹیوں کا اعلان، نوٹی فکیشن جاری

ہرسال کی طرح 8 اور 10 کو محرم الحرام کا مرکزی جلوس نشتر پارک جبکہ 9 تاریخ کو مارٹن کوارٹر سے برآمد ہوگا اور روایتی راستوں پر ہوتے ہوئے کھارادر پہنچ کر اختتام پذیر ہوگا۔

شہرسےآنے والے ٹریفک کو گرومندر سے سولجربازار،انکل سریا چوک،جوبلی کی جانب موڑاجائے گا جبکہ ناظم آبادسےایم اےجناح روڈ سے آنےوالی گاڑیوں کو لسبیلہ سے نشترروڈ تین ہٹی کی طرف بھیجا جائے گا۔

اسی طرح لیاقت آبادسےایم اےجناح روڈ آنے والی والی گاڑیوں کو تین ہٹی سےمارٹن روڈ موڑا جائے گا، شہری جمشید روڈسے ہوکر کشمیر روڈ، شاہراہ قائدین اور پھر شاہراہ فیصل کی طرف جائیں گے۔

سپرہائی وےسے شہر کی طرف آنے والی گاڑیوں کو  لیاقت آباد 10 نمبر سے ناظم آبادکی طرف موڑا جائے گا جبکہ سائٹ کے علاقے حبیب بینک چورنگی کے ٹریفک کو شیرشاہ اورماڑی پور روڈکی جانب موڑا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں: محرم الحرام : ملک بھر میں سیکیورٹی الرٹ، علماء کرام کے اسلام آباد میں داخلہ پر پابندی

نیشنل ہائی وے سے آنے والی گاڑیوں کو راشد منہاس اور اسٹیڈیم روڈ کی طرف موڑا جائے گا جبکہ سائٹ کے علاقے حبیب چورنگی سے آنے والی گاڑیاں لیاقت آباد 10 نمبر  سے ہوتے ہوئے حسن اسکوائر پہنچ سکیں گی اسی طرح مخالف روڈ پر چلنے والی گاڑیاں شیرشاہ ماڑی پور پہنچیں گی۔

محکمہ ٹریفک پولیس کی جانب سے جاری پلان کے مطابق کسی بھی گاڑی کو گرومندر سے آگے جانے کی اجازت نہیں ہوگی اسی طرح شاہراہ قائدین سے آنے والی گاڑیاں سوسائٹی آفس سے آگے نہیں جاسکیں گی البتہ خصوصی پاسز والی گاڑیوں کو جلوس کے داخلی مقام تک جانے کی اجازت ہوگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں