امریکا نے ایران کے حوالے سے نیا ایکشن گروپ تشکیل دے دیا: Sancions
The news is by your side.

Advertisement

امریکا نے ایران کے حوالے سے نیا ایکشن گروپ تشکیل دے دیا

واشنگٹن: امریکا نے ایران کے اقدامات پر نظر رکھنے کے لیے ایک نیا ایکشن گروپ تشکیل دے دیا جو روزانہ کی بنیاد پر جائزہ لے گا۔

تفصیلات کے مطابق امریکا کی جانب سے ایران پر اقتصادی پابندیاں عائد کرنے کے بعد اب اس پر نظر رکھنے کے لیے ایک نیا ایکشن گروپ بھی تشکیل دے دیا گیا ہے۔

امریکی میڈیا کے مطابق امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے واشنگٹن میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکا نے ایران کے حوالے سے ایکشن گروپ تشکیل دیا ہے، ایکشن گروپ محکمہ خارجہ میں ایران سے متعلق رپورٹ کرے گا۔

انہوں نے کہا کہ ایکشن گروپ روزانہ کی بنیاد پر ایران کے معاملات کا جائزہ لے گا، سینئر سفارت کار برائن ہک ایکشن گروپ کی قیادت کریں گے۔

امریکی وزیر خارجہ نے کہا کہ ایرانی قیادت امریکا کے خلاف شدت پسندرویے کی ذمہ دار ہے، صدر ٹرمپ نے ایرانی قیادت پر دباؤ کی پالیسی اپنائی ہے۔


امریکا ایران کی شرپسند سرگرمیوں کے خلاف کھڑا رہے گا: ترجمان امریکی محکمہ خارجہ


مائیک پومپیو کا مزید کہنا تھا کہ امید ہے ایران سے نیا سمجھوتہ کرنے میں کامیاب ہوجائیں گے، جبکہ ایران پر سفارتی اور معاشی دباؤ جاری رکھیں گے۔

قبل ازیں امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان ہیدر نوئرٹ نے کہا ہے کہ امریکا ایران کی پالیسیوں اور شرپسند سرگرمیوں کے خلاف ہمیشہ کھڑا رہے گا، اور سخت فیصلے کیے جائیں گے، امریکا کی ایران سے معلق حکمت عملی واضح ہے اور اس پر عمل بھی کر رہے ہیں۔

انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ ایران مشرقی وسطیٰ کے لیے ہمیشہ سے خطرہ رہا ہے، اور یہ موقف نہ صرف امریکا بلکہ دیگر ملکوں کا بھی ہے، جس کے باعث ایران پر پابندیاں ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں