site
stats
سندھ

جلسے کا مقصد مصطفیٰ کمال کو وزیر اعظم بنانا نہیں، انیس قائم خانی

کراچی: پاک سرزمین پارٹی کے صدر انیس قائم خانی نے کہا ہے کہ ہماری قوم کے لوگ پڑھے لکھے، باشعور اور تہذیب یافتہ سمجھے جاتے تھے مگر آج را ایجنٹ ہونے کا طعنہ دیا جاتا ہے، کل کا جلسہ مصطفیٰ کمال کو وزیراعظم بنانے کے لیے نہیں بلکہ عوام کو اُن کے جائز حقوق دلوانے کے لیے ہے۔

پاک سرزمین پارٹی کے تحت منعقد ہونے والے جلسے کے انتظامات کا جائزہ لینے کے بعد انیس قائم خانی نے جلسہ گاہ میں موجود کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آپ لوگ آج جس نیک مقصد کے لیے محنت کررہے ہیں وہ بہت بڑا کام ہے، آپ کی محنت رائیگاں نہیں جائے گی۔

صدر پاک سرزمین پارٹی نے کہا کہ ہمارے لوگ باشعور اور تہذیب یافتہ سمجھے جاتے تھے مگر کچھ لوگوں نے انہیں اپنے مفادات کے لیے استعمال کیا اور آج انہی لوگوں کو را ایجنٹ ہونے کا طعنہ دیا جاتا ہے۔ انیس قائم خانی نے کہا کہ پی ایس پی وہ واحد جماعت ہے جس میں آنے اور ساتھ دینے کے لیے لوگوں کو آسائشوں اور سیٹوں کی قربانی دینی پڑتی ہے، لوگ ہمارے منشور سے متاثر ہورہے ہیں یہی وجہ ہے کہ آج دنیا بھر میں جہاں بھی پاکستانی آباد ہیں وہاں ہماری موجودگی ہے۔

پاک سرزمین پارٹی کے صدر نے عوام سے اپیل کی کہ وہ کل کے جلسے میں شرکت کریں کیونکہ جلسہ مصطفیٰ کمال کو وزیر اعظم بنانے کے لیے نہیں بلکہ غربت اور مسائل کی چکی میں پسی ہوئی عوام کے جائز حقوق کی جدوجہد کا حصہ ہے، عوام کل اپنی زندگی کے صرف چند گھنٹے عوامی عدالت کو دیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ عوامی مینڈیٹ کے ساتھ حکمرانوں کو اپنے مسائل کو حل کرنے کیلئے مجبور کریں گے اور اپنا حق لے کر رہیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top