انیس قائم خانی طبعیت بگڑنے کے باعث جیل سے اسپتال منتقل -
The news is by your side.

Advertisement

انیس قائم خانی طبعیت بگڑنے کے باعث جیل سے اسپتال منتقل

کراچی : سینٹرل جیل میں ڈاکتر عاصم کیس میں قید پاک سرزمین پارٹی کے رہنما انیس قائم خانی کو طبعیت بگڑنے پر جیل سے اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈاکٹر عاصم کیس میں دہشت گردوں کے علاج کروانے میں معاونت کرنے کے الزام میں گرفتار پاک سرزمین پارٹی کے رہنما انیس قائم خانی کی جیل میں طبعیت بگڑ گئی ہے، کمر اور کندھے میں شدید درد کی شکایت کے بعد انہیں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے،ڈائریکٹر حادثات جناح اسپتال کے مطابق انیس قائم خانی کو اسپتال کے اسپیشل وارڈ میں داخل کیا گیا ہے۔

مزید جانیے : وسیم اختر،انیس قائم خانی، اورروف صدیقی کو سینٹرل جیل منتقل کردیا گیا

انیس قائم خانی کے اہل خانہ اطلاع ملنے پر فوری طور پر اسپتال پہنچ گئے ہیں،میڈیا سے بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ انیس قائم خانی گردوں کے عارضے میں مبتلا ہیں جب کہ انہیں گردن کے درد کی شکایت بھی رہتی تھی۔

یہ خبر بھی پڑھیں : ڈاکٹرعاصم کیس،انیس قائمخانی کی عبوری ضمانت منظور

واضح رہے کہ ڈاکٹر عاصم کیس میں ضمانت مسترد ہونے کے بعد پاک سرزمین پارٹی کے رہنما انیس قائم خانی کو احاطہ عدالت میں گرفتار کر لیا گیاتھا،اُن کے ساتھ گرفتار ہونے والے دیگر دو رہنماؤں میں رؤف صدیقی اور نامزد میئر کراچی وسیم اختر کا تعلق متحدہ قومی موومنٹ سے تھا جب کہ پیپلز پارٹی سے تعلق رکھنے والے عبدالقادر پٹیل عدالت سے بناء گرفتاری دیے واپس چلے گئے تھے۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں