The news is by your side.

Advertisement

2019-20 کا ترقیاتی بجٹ 1837 ارب ہوگا: خسرو بختیار

اسلام آباد: وزیر منصوبہ بندی خسرو بختیار نے کہا ہے کہ سالانہ بجٹ ترتیب دیا جا رہا ہے، 2019-20 کا ترقیاتی بجٹ 1837 ارب ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق خسرو بختیار نے وزارت منصوبہ بندی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سالانہ بجٹ ترتیب دیا جا رہا ہے، 2019-20 کا ترقیاتی بجٹ 1837 ارب ہوگا۔

وزیر منصوبہ بندی نے کہا کہ 925 ارب وفاقی پی ایس ڈی پی ہوگا، 250 ارب کے پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کے لیے رکھے گئے ہیں، 675 ارب پی ایس ڈی پی کے تحت لے کر چلیں گے۔

انھوں نے بتایا کہ زراعت کے بجٹ میں اضافہ کیا گیا ہے، نالج اکانومی کے سلسلے میں بھی بڑا قدم اٹھایا گیا ہے، کم ترقی یافتہ علاقوں کی ترقی کے لیے بھی فنڈز رکھے گئے ہیں، فاٹا ڈویلپمنٹ کے لیے فنڈز مختص کیے ہیں۔

خسرو بختیار نے بتایا کہ توانائی سیکٹر میں سپلائی ڈیمانڈ برابر اور ٹرانسمیشن کو فوکس کیا گیا، ڈیمز بھاشا، داسو اور مہمند کے لیے فنڈز پی ایس ڈی پی میں رکھے گئے، اعلیٰ تعلیم کے بجٹ کو بھی بڑھانا ہے تا کہ تعلیمی معیار بہتر ہو۔

وزیر منصوبہ بندی کا کہنا تھا کہ سی پیک کے ایسٹرن کوریڈور، سکھر حیدرآباد بی او ٹی پر اسی سال کام شروع کریں گے، 80 فی صد تک مکمل منصوبوں کو مکمل فنڈنگ دی جائے گی، صوبوں کے ساتھ کوآرڈی نیشن کے لیے ماہانہ کمیٹی قائم کر دی ہے۔

انھوں نے کہا کہ ترقیاتی پروگرام جو بنا رہے ہیں اس سے بہتر نہیں بنا سکتے تھے، گزشتہ حکومت نے 2 کھرب کے 393 منصوبے پلان میں ڈالے، جب کہ ہمارا پلان پاکستان میں یکساں ترقی کا ہے، بیرونی اداروں سے 250 سے 300 ارب ملنے کی امید ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں