The news is by your side.

Advertisement

شاہین ایئرلائن کیخلاف ایک اور مقدمہ، منی لانڈرنگ کے شواہد مل گئے

اسلام آباد: شاہین ایئر انٹرنیشنل کےخلاف تحقیقات میں اہم پیشرفت ہوئی ہے، ایف آئی اے نے کارپوریٹ کرائم سرکل میں ایک اور مقدمہ درج کرکے یاور محمود کو گرفتار کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق شاہین ایئر انٹرنیشنل کے خلاف وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف آئی اے نے تحقیقات کا دائرہ وسیع کرتے ہوئے کارروائیاں تیز کر دی ہیں۔

نجی ائیرلائن کے خلاف تحقیقات سول ایوی ایشن اتھارٹی کی درخواست پر کی جارہی ہیں، ایف آئی اے حکام کا کہنا ہے کہ کمپنی نےخزانےکو بھاری نقصان پہنچایا ہے۔

تحقیقات میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ شاہین ایئر نے1.4 بلین روپےکا قومی خزانےکو نقصان پہنچایا جب کہ فلائٹ آپریشن کےچارجز مارچ 2018 سےسی اے اے کو نہیں دیےگئے۔

ایف آئی اے کے مطابق تحقیقات میں منی لانڈرنگ کے بھی اہم شواہد ملے ہیں جس پر کارپوریٹ کرائم سرکل میں ایک اور مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

ایف آئی اے نے شاہین ایئر کے یاور محمود کو گرفتار کر لیا ہے اور اس سے تفتیش کی جارہی ہے،اس سے قبل شاہین ایئر کے9 ڈائریکٹرز کےخلاف بھی مقدمات درج ہو چکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں