The news is by your side.

Advertisement

شریف خاندان ہنڈی کے ذریعے کروڑوں روپے منتقل کرنے میں ملوث نکلا

متعدد افراد کے شہباز شریف اور بیٹوں کے خلاف بیانات ریکارڈ

اسلام آباد : شریف خاندان پر ایک اورمقدمہ کی تلوار لٹکنے لگی ، سابق حکمراں خاندان ہنڈی کے ذریعے کروڑوں روپے منتقل کرنے میں ملوث نکلا، متعدد افراد نے شہباز شریف اور بیٹوں کے خلاف بیانات ریکارڈ کرا دیے، جس کے بعد نیب نے کیس کی تیاری شروع کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق شریف خاندان کی کرپشن کی ایک اورکہانی سامنےآگئی، نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ سابق حکمراں خاندان نے کروڑوں روپے ہنڈی کے ذریعے منتقل کیے، یہ انکشاف آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس میں ہوا ۔جس کے بعد نیب نے ایک اور کیس کی تیاری شروع کردی ہے۔

ذرائع نے کہا متعدد افراد نے نیب کو حمزہ شہباز، سلمان شہباز اور شہباز شریف کے خلاف بیانات ریکارڈ کرا دیے ہیں اور نیب کی جانب سے شریف خاندان کے آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس کی تحقتقات میں مزید تیزی آگئی ہے۔

یاد رہے قومی احتساب بیورو (نیب) نے غیر قانونی اثاثوں اور رمضان شوگرملزکیس میں شہباز اور حمزہ شہباز کو نامزد  کرنے کا فیصلہ کیا تھا جبکہ احتساب عدالت نیب کو شہباز شریف سے آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس میں جیل میں تفتیش کی اجازت دی چکی ہے ، نیب کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کے اثاثے ذرائع آمدن سے مطابقت نہیں رکھتے۔

مزید پڑھیں : رمضان شوگر ملز کیس، شہباز شریف اور حمزہ شہباز ملزم نامزد

واضح رہے قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کے دونوں بیٹوں حمزہ شہباز اور سلمان شہباز پر سرکاری خزانے کے غیر قانونی استعمال کا الزام ہے جبکہ نیب نے وزارتِ داخلہ سے سابق وزیر اعلیٰ پنجاب کے دونوں صاحب زادوں کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش کی تھی اور اس ضمن میں وزارت داخلہ کو مراسلہ بھی ارسال کر دیا تھا۔

خیال رہے نیب لاہور نے گرفتار شہبازشریف کی تفتیشی رپورٹ عدالت میں جمع کرادی ، رپورٹ میں کہا شہباز شریف بیٹوں کوتحائف کی مد میں 17 کروڑ کے ذرائع آمدن نہ بتاسکے ، شہبازشریف کےاکاؤنٹ میں 2011 سے2017 کے دوران 14 کروڑ آئے، 2 کروڑ سے زائد رمضان شوگر ملز کے توسط سے مری میں بطور جائیداد لیز حاصل کی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں